نامور کھلاڑیوں سے عہدوں کیلئے درخواستیں طلب کرنادرست نہیں، محسن خان

نامور کھلاڑیوں سے عہدوں کیلئے درخواستیں طلب کرنادرست نہیں، محسن خان

کراچی(یواین پی)سابق قومی اوپننگ بیٹسمین محسن خان پاکستانی ٹیم کے ہیڈ کوچ بننے کی خواہش رکھتے ہیں لیکن انہیں پی سی بی کی اس پالیسی سے سخت اختلاف ہے کہ نامور پلیئرز سے عہدوں کیلئے درخواستیں طلب کی جائیں۔قومی ٹیم کے نئے کوچنگ سٹاف کیلئے پی سی بی حکام نے اشتہار جاری کر کے خواہشمند حضرات سے درخواستیں طلب کی ہیں اور محسن خان بھی ہیڈ کوچ کی پوسٹ کیلئے ممکنہ امیدوار ہو سکتے ہیں تاہم انہوں نے گزشتہ روز ایک سیمینار کے بعد میڈیا سے گفتگو میں واضح کیا کہ وہ پاکستان کرکٹ میں اپنا حصہ ڈالنے اور پی سی بی میں خدمات کی انجام دہی کیلئے تیار ہیں کیونکہ پاکستان کا سبز ہلالی پرچم ان کی شناخت ہے اور وہ ہمیشہ ملک کی خدمت کرنے کا موقع تلاش کرتے رہتے ہیں تاہم بعض سابق کپتانوں کی طرح انہیں بھی اس پالیسی پر اعتراض ہے کہ مختلف خدمات کیلئے نامور پلیئرز کو درخواستوں کیلئے کیوں مجبور کیا جاتا ہے کیونکہ یہ بات کسی طور بھی درست نہیں کہ اس کھلاڑی سے کسی پوسٹ کیلئے درخواست مانگی جائے جو ملک کی خدمت کیلئے پہلے ہی تیار ہے۔محسن خان نے واضح کیا کہ انہیں ابھی تک بورڈکی جانب سے کوئی پیشکش نہیں ہوئی لیکن وہ کھیل کی بھرپور سپورٹ کیلئے تیار ہیں اور ماضی کی طرح انکار نہیں کریں گے۔ان کا کہنا تھا کہ بعض عہدوں کیلئے بورڈ کی جانب سے انہیں ماضی میں پیشکش کی گئی لیکن انہوں نے پی سی بی میں بدعنوان افراد کی موجودگی کے پیش نظر آفرز ٹھکرا دیں تاہم اب وہ کسی بھی منصب پر فرائض کی انجام دہی کیلئے تیار ہیں۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی