نامناسب حفاظتی اقدامات، سالانہ 4ارب کی کھالیں ضائع ہونے کا انکشاف

 نامناسب حفاظتی اقدامات، سالانہ 4ارب کی کھالیں ضائع ہونے کا انکشاف

راولپنڈی (یواین پی)عید قربان پر نامناسب حفاظتی اقدامات کی وجہ سے ہر سال 4ارب روپے کی کھالیں ضائع ہوجاتی ہیں تاہم کھالوں کی حفاظت بارے آگاہی کی فراہمی اور دیگر اقدامات کی بدولت اس نقصان کوکم کیا جا سکتا ہے۔ان خیالات کا اظہار محکمہ لائیو سٹاک کے زیر اہتمام کھالوں کی ترسیل اور حفاظتی اقدامات بارے سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے سیکرٹری لائیو سٹاک پنجاب زاہد حسین،ڈائریکٹر لائیو سٹاک راولپنڈی، عہدیداران پاکستان ٹینرز ایسوسی ایشن و دیگر ماہرین نے کیا۔ ماہرین نے کہا کہ کھالوں کے ضیاع سے شعبہ کو براہ راست 1.5 ارب روپے کا نقصان پہنچتا ہے۔ اس سے صنعت کاروں اور کھالوں کے کاروبار سے وابستہ افراد کو خسارہ برداشت کرنا پڑتا ہے۔ ریجنل چیئرمین اعظم ملک نے کہا کہ معلومات کی کمی اور عدم آگاہی کے نتیجے میں مزید 400 ملین روپے کا نقصان پہنچتا ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے معلوماتی لٹریچر کی فراہمی کے اقدامات سے چمڑے کی صنعت اور کاروبار سے وابستہ افراد کے نقصانات کو کم کیا جا سکے گا۔انہوں نے کہا کہ چمڑے کی صنعت کو گیس اور سستی بجلی کی فراہمی سمیت بنیادی ڈھانچہ کی دیگر ضروریات کی فراہمی کیلئے بھی جامع اقدامات کی ضرورت ہے۔

مزید : کامرس