انصاف ہر شخص کو میسر ہے  مگر کرپشن پر اپوزیشن کو ریلیف نہیں ملے گا: فردوس عاشق

    انصاف ہر شخص کو میسر ہے  مگر کرپشن پر اپوزیشن کو ریلیف نہیں ملے گا: فردوس ...

  

اسلام آباد/سیالکوٹ(مانیٹرنگ ڈیسک،اے این این)وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے انصاف کی دستیابی ہر شخص کو میسر ہے لیکن حکومت کرپشن پر اپوزیشن کو کوئی ریلیف نہیں دے سکتی لہٰذا کشمیر کے مسئلے کو کرپشن کی نذر نہیں ہونے دیں گے۔ بلاول بھٹو زرداری کی پریس کانفرنس پر ردعمل دیتے ہوئے ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ کراچی کرپشن کی دلدل میں پھنسا ہوا ہے، پیپلز پارٹی اور سندھ حکومت کراچی اور سندھ کی فکر کرے۔فردوس عاشق اعوان نے کہاکہ معاشی محاذ پر ڈکیتیاں اور چوریاں ہوئیں، اس کے لیے این آر او ملنا ناممکن ہے۔ان کا کہنا تھا کہ معاشی محاذ پر ڈاکوؤں کا صفایا کرنا ہے، جغرافیائی محاذ پر بھی چیلنجز کا سامنا کرنا ہے، دونوں محاذوں پر قوم کے سامنے سرخرو ہونا ہے۔وزیراعظم کی معاون خصوصی نے کہا کہ جعلی اکاؤنٹس کیس میں فریال بی بی کے اکاؤنٹ میں ٹی ٹی کون کراتا رہا اور بینیفشری کون تھا، یہ دیکھنا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ قوم نہیں چاہتی کہ ہم سیاست میں سمجھوتہ کریں، ہمیں اندرونی و بیرونی محاذ پر آئین و قانون کی بالا دستی کو یقینی بنانا ہے۔فردوس عاشق اعوان کا کہنا تھا کہ پیپلز پارٹی لعن طعن کے بجائے سندھ حکومت کی کارکردگی پر نظر رکھے۔انہوں نے مزید کہا کہ پیپلز پارٹی سندھ میں آئین و قانون کی بالا دستی یقینی بنائے اور صوبے کو کرپشن کے شکنجے سے آزاد کرائے۔ان کا کہنا تھا کہ پیپلز پارٹی سندھ میں کرپشن پر زیرو ٹالرنس کا اعلان کرے اور بلاول اپنی پھپھی سے اس کا آغاز کریں۔وزیراعظم کی معاون خصوصی نے کہا کہ کرپشن کے خلاف تمام اقدامات اس حکومت کی ذمہ داری ہے۔کشمیر کے حوالے سے بات کرتے ہوئے ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ کشمیر کا محاذ ہمارے دل کے قریب ہے، کشمیر کی آزادی اور حق خودارادیت کی ذمے داری سب کی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ پوری قوم کشمیریوں کے شانہ بشانہ کھڑے ہوکر لائحہ عمل تیار کرے، کشمیر کاز کے لیے آگے بڑھیں، حکومت آپ کے ساتھ قدم ملا کر چلنے کو تیار ہے۔عید الضحیٰ کے روز سیالکوٹ میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹرفردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ عالمی انسانی حقوق کی تنظیمیں دیکھیں مقبوضہ کشمیر کو جیل میں تبدیل کردیا گیا ہے اور کشمیری مسلمانوں کو مودی حکومت نے جبر کرکے عید کی نماز اور قربانی سے روکا۔ فردوس عاشق اعوا ن نے کہا کہ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں علاج معالجے کی سہولتیں دستیاب نہیں ہیں اور بھارت بھول چکاہے کہ جذبے پابند سلاسل نہیں ہوسکتے۔دریں اثناء سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر اپنی ٹویٹ میں فردوس عاشق اعوان کا کہنا ہے کہ سیکولر اور جمہوری بھارت مودی کے ہاتھوں قتل ہوچکا ہے۔فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ ہندوتوا کی سوچ پر کاربند مودی سرکار نے بھارتی تسلط کی پالیسی نہ ترک کی تو خطے کے امن کو شدید خطرات لاحق ہیں۔ بھارت اپنے انتہا پسندانہ رویے پر نظر ثانی کرے۔ کشمیر ایک متنازع علاقہ ہے جس کا حل اقوام متحدہ کی قراردادوں کی روشنی میں ہی ممکن ہے۔معاون خصوصی نے کہا کہ عید الضحیٰ کے روز مسلمانوں کو ان کے مقدس تہوار منانے سے روکنا ثابت کرتا ہے کہ سیکولر اور جمہوری بھارت مودی کے ہاتھوں قتل ہوچکا ہے۔ کشمیریوں اور پاکستانیوں کی خوشیاں اور غم سانجھے ہیں۔ کشمیر میں آزادی کا سورج طلوع ہو کر رہے گا۔فردوس عاشق اعوان نے مزید کہا کہ کوئی جبر، کوئی ظلم، کوئی کرفیو، کوئی ہتھکڑی اور کوئی قیدخانہ کشمیریوں کو غلام نہیں بنا سکتا۔ عید کے دن کشمیریوں کو ان کی مذہبی رسومات ادا کرنے سے روکنا ثابت کرتا ہے کہ بھارت کشمیر پر غاصبانہ قبضہ کر رہا ہے۔ بھارت نے تسلط کی پالیسی نہ ترک کی تو خطے کے امن کوخطرات لاحق ہیں۔

 فردوس عاشق اعوان

مزید :

صفحہ اول -