عیدالاضحی، لاہور میں 12ون ویلر گرفتار، والدین کی ضمانت پر رہائی

  عیدالاضحی، لاہور میں 12ون ویلر گرفتار، والدین کی ضمانت پر رہائی

لاہور(نامہ نگار)ڈیوٹی مجسٹریٹس کی عدالتوں میں عیدالفطر کے دن ون ویلنگ کرنے والے 12سے زائدمنچلے ویلرز کو عدالت میں پیش کیاگیا، عدالت نے ویلرز کی جانب سے معافی مانگنے اوران کے والدین کی طرف سے آئندہ ون ویلنگ نہ کرنے کی ضمانت دینے پر انہیں رہاکرنے کا حکم دے دیا،اسی طرح عدالت نے پولیس کی جانب سے گرفتارکئے جانے والے ایک اناڑی قصائی کو بھی جرم قابل ضمانت ہونے پر رہاکردیا۔گزشتہ روزکینٹ اور صدرسرکل کی پولیس نے ون ولینگ کے جرم میں 12سے زائد نوجوانوں عاصم، لیاقت، فرید،احمدوغیرہ کو گرفتارکیا،جنہیں گزشتہ روز ڈیوٹی مجسٹریٹس کے روبرہ پیش کیا گیا،پولیس ون ویلنگ کرنے والوں کو جیل بھجوانے کی استدعا کرتی رہی تاہم عدالت نے وکلا ء اور نوجوانوں کے والدین کی یقین دہانی پر ان کو معافی نامہ داخل کرانے کاحکم دیا،عدالت نے والدین کی طرف سے آئندہ بچوں کی ون ویلنگ نہ کرنے کی یقین دہانی پرنوجوانوں کی ضمانتیں منظور کرتے ہوئے انہیں رہا کردیا،عدالت میں پولیس کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ یہ ون ویلرزسڑکوں پر ون ویلنگ کررہے تھے جس سے کوئی بڑا حادثہ رونماہو سکتا تھا،علاوہ ازیں عید کے دوسرے روز روفیشنل قصائیوں کے عدم دستیابی پر اناڑی قصائی تجربہ کار ہو نے کاجھانسہ دے کر شہریوں سے رقم بٹور تے رہے، متاثرہ شہری کی شکایت پر اناڑی قصائیوں کوپکڑ کرمتعلقہ پولیس کے حوالے کیا جسے ڈیوٹی مجسٹریٹ نے قابل ضمانت ہونے پر رہا کرنے کا حکم جاری کردیا۔

ون ویلنگ،ضمانت

مزید : پشاورصفحہ آخر