قومی بحران کے دوران پاکستان کے وسائل چھیننے کی کوشش کی گئی، بلاول

   قومی بحران کے دوران پاکستان کے وسائل چھیننے کی کوشش کی گئی، بلاول

  

کراچی(آئی این پی)پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو نے وفاقی حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ کورونا کی وبا کے دوران قوم کومتحد کرنے کے بجائے وسائل چھیننے کی کوشش کی گئی، ڈیزاسٹر اور بحران میں اس طرح سیاست نہیں کھیلی جاتی، جب عوام ایک دکھ سے گزر رہے ہیں تو ہم ان سے حق کیسے چھین سکتے ہیں۔جمعرات کوکراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے بلاول بھٹو نے کہا کہ دنیا میں چاہے جس طرح کا بھی نظام حکومت ہو وہ کورونا جیسے مسائل پر پوری قوم ایک ہوتی ہے اور ایک دوسرے کی مدد کرنے کی کوشش کرتے ہیں، بدقسمتی سے پاکستان میں کورونا جیسی وبائی صورت حال میں بھی ملک کے وسائل چھیننے کی بات ہورہی تھی۔ان کا کہنا تھا کہ جب میرے صوبے میں مون سون کی تاریخی بارش سے عوام کے لیے مسائل کھڑے ہوئے اور کراچی میں کوئی مشکل ہوتی ہے تو صوبے کے دیگرعلاقوں کی طرح تشویش کی بات ہے۔ہم ایک بحران سے گزرے اور بارش کا ایک اور اسپیل آیا جس سے نقصان ہوا پھر وفاق کو خیال آیا کہ سندھ کے دارالحکومت میں کوئی بحران ہے۔ان کا کہنا تھا کہ وفاق نے اس لیے نیشنل ڈیزاسٹر منیجمنٹ اتھارٹی کو بھیجا گیا، ہم این ڈی ایم اے کا شکرگزار ہیں کیونکہ دیر آید درست آید تاکہ مل کر مسائل کو حل کریں گے۔انہوں نے کہا کہ جب عوام مشکل میں ہوتو وفاق کی نیت صاف ہونی چاہیے لیکن یہ بدقسمتی کی بات ہے کہ اس صوبے کے عوام کے لیے وفاق کی بدنیتی نظر آتی ہے۔بلاول کا کہنا تھا کہ ڈیزاسٹر اور بحران میں اس طرح سیاست نہیں کھیلی جاتی، جب عوام ایک دکھ سے گزر رہے ہیں تو ہم ان سے حق کیسے چھین سکتے ہیں۔

بلاول

مزید :

صفحہ آخر -