وزیراعلیٰ کادورہ ہیڈ پنجند، انہار افسروں  کی پھرتیاں، قیمتی درخت فروخت

وزیراعلیٰ کادورہ ہیڈ پنجند، انہار افسروں  کی پھرتیاں، قیمتی درخت فروخت

  

علی پور(نمائندہ پاکستان)وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی پندرہ اگست کو ہیڈ پنجند متوقع آمد کے پیش نظر محکمہ انہار کے ایکسین(بقیہ نمبر5صفحہ12پر)

 زین ملک نے نہروں پر درختوں کا صفایا کروا دیا بکھی مائینر پر لاکھوں کے درخت بھٹہ خشت پر فروخت کردئیے گئے ہیں سب ڈویژن شہر سلطان سب ڈویژن جتوئی سب ڈویژن علی پور کی تمام نہروں پر خود رو پودے اگ آتے ہیں جن کو لاکھوں میں فروخت کروادیا جاتا ہے اور یہ چھوٹے پودے بھٹہ خشت کو فروخت ہوتے ہیں تین سب ڈیژنوں کی نہروں کا پانی فروخت کیا جاتا ہے جس سے کروڑوں روپے کی کمائی کی جاتی ہے باخبر ذارئع مطابق ممتاز نامی سیٹھ تمام وصولیاں کر کے افسران کا حصہ ان کو دیتا ہے برجی نمبر 46,45 کے حوالے سے ایس ڈی او کو تحریری بتایا گیا کہ اس گھٹی سے  25000 ہزار روپے وصولی کی جاتی ہے گھٹی  24 گھنٹے چلتی ہے جس سے لوگوں کے مکان اور دیگر فصلیں متاثر ہوتی ہیں لیکن ایک دن گھٹی بند کر کے ویڈیوں اور تصاویریں بنوا کر دوسرے دن گھٹی کٹ کھول دیا جاتا ہیں بکھی مائینر ڈیرہ شکیل شاہ کے نزدیک کروڑوں کے درخت بٹھہ خشت کو اونے پونے بیچ دئیے جاتے ہیں اور حکومت کو کروڑوں کا نقصان ہوتاہے وزیر اعظم عمران خان کی شجر کاری مہم گرین پاکستان سکیم میں اربوں کے درخت لگائے گئے لیکن افسوس ناک پہلو یہ ہے کہ ایکسین مظفرگڑھ  ایس ڈی او انہارعلی پور اور سیٹھ ممتاز نے گرین پاکستان کی دھجیاں بکھیر کر رکھ دی ہیں درختوں کو بیچ دیا ہے نہری کنارے مکمل صفائی کروا دی گئی اسی طرح سب ڈویژن جتوئی،علی پور، شہر سلطان کی تمام نہروں کا پانی بھی  زمینداروں کو قیمتاً فروخت کر دیا گیا ہے جس سے ٹیل کے کاشتکار پانی کی بوند بوند کو ترس جاتے ہیں اور محکمہ ماہانہ کروڑوں کا پانی فروخت کر دیتا ہے اس سلسلہ میں جب ایس ڈی او نعمان سے ان کا موقف جاننے کیلئے کال کی گئی انہوں نے کال اٹینڈ نہ کی جبکہ سیٹھ ممتاز دنگا نے کہا کہ ہم جس کا پانی روکتے ہیں کسی نہ کسی سیاسی آدمی کا فون آ جاتا ہے البتہ نہر کے کنارے لگے درخت ہم نے خود کٹوائے ہیں وہ پانی کی روانی کو روکتے ہیں اور وزیر اعلیٰ پنجاب علی پور آ رہے ہیں اخراجات کیلئے ایکسین نے خود فون پر ہدایت دی تھی کہ درخت فروخت کر دیں میں چھوٹا ملازم ہو صرف تعمیل کر سکتا ہوں میں نے رقم ایس ڈی او کو دے دی ہے عوامی سماجی حلقوں بلال حسین، نور احمد، خان محمد، یٰسین خان، دلاور خان، سیٹھ اسماعیل، ریاض خان، اللہ بخش، وزیر احمد، عاشق حسین نے شدید احتجاج کرتے ہوئے بتلایا کہ ٹیل تک پانی آتا ہی نہیں پانی راستہ میں ہی فروخت کر دیا جاتا ہے اصل حقدار پانی سے محروم رہ جاتے ہیں یہ لوگ خود پانی چوری کروا کر پیسے لیتے ہیں ہماری وزیر اعلیٰ سے فریاد ہے کہ وہ فوری طور پر ایکشن لے ورنہ ہماری فصلیں برباد ہو جائیں گی۔

محکمہ انہار

مزید :

ملتان صفحہ آخر -