بعض ممالک نے کورونا کوکریک ڈاؤن، ریاستی جبرکے بہانے کے طور استعمال کیا: اقوام متحد ہ 

بعض ممالک نے کورونا کوکریک ڈاؤن، ریاستی جبرکے بہانے کے طور استعمال کیا: ...

  

نیویارک(آن لائن)اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوتریس نے خبردار کیا ہے کہ کورونا وائرس وبائی مرض نہ صرف عالمی سطح پر غربت سے لڑنے، امن کے قیام اور ترقیاتی فوائد کے لیے خطرہ بن گیا ہے بلکہ موجودہ تنازعات کو بڑھانے اور نئے پیدا کرنے کیلئے بھی ایک خطرہ ہے۔ اپنے ایک بیان میں انتونیو گوتریس نے کہا کہ استحکام امن کے بنیادی تصور مثبت امن کو برقرار رکھنا ہے جس کا مطلب لڑائی کے خاتمے کے لیے کسی ملک کے ساتھ عالمی برادری کے تعاون سے صرف بندوقیں خاموش کرانا ہی نہیں بلکہ اس سے بالاتر ہو کر لوگوں میں تحفظ اور نمائندگی کا احساس پیدا ہونا ہوتا ہے۔ وبائی امراض نے پوری دنیا میں مستحکم امن کے حصول کو چیلنجز میں ڈال دیا ہے۔ صحت اور انسانی المیوں کے متعلق حساس اور مربوط نقطہ نظر سے پائیدار امن کی فراہمی کو برقرار رکھنے میں مدد مل سکتی ہے۔ ہم نے بہت سارے پرامن احتجاج دیکھے ہیں اور متعدد ممالک میں کورونا کو سخت کریک ڈؤن اور ریاستی جبر میں اضافے کے بہانے کے طور استعمال کیا گیا اور دنیا کے تقریبا 23 ممالک میں قومی انتخابات یا ریفرنڈم ملتوی کردیئے گئے۔

اقوام متحدہ

مزید :

صفحہ آخر -