عدلیہ کہتی ہے کراچی کی جان چھوڑو مگر مجھے عوام نے ووٹ دیا، جیل سے . . . میئر کراچی بھی بول پڑے

عدلیہ کہتی ہے کراچی کی جان چھوڑو مگر مجھے عوام نے ووٹ دیا، جیل سے . . . میئر ...
عدلیہ کہتی ہے کراچی کی جان چھوڑو مگر مجھے عوام نے ووٹ دیا، جیل سے . . . میئر کراچی بھی بول پڑے

  

کراچی(ویب ڈیسک) میئر کراچی وسیم اختر کا کہنا ہے کہ عدالیہ کہتی ہے کراچی کی جان چھوڑو اور گھر جاؤ مگر عوام نے ہمیں ووٹ دیا اور جیل میں رہ کرالیکشن جیتا ہوں لہٰذا چیف جسٹس سے کہتا ہوں کہ میری پیٹیشن پر بھی فیصلہ کریں۔

کراچی میں ضلع شرقی کی انتظامیہ کی جانب سے جشن آزادی کے سلسلے میں خصوصی تقریب کا اہتمام کیا گیا جس میں 12 بجتے ہی تقریب میں موجود تمام لوگوں نے قومی ترانہ پڑھا اور کیک کاٹا۔

شرکا سے خطاب میں میئر کراچی وسیم اختر نے پورے ملک کو جشن آزادی کی مبارک باد پیش کی اور کہا کہ عدالیہ کہتی ہے کراچی کی جان چھوڑو اور گھر جاو¿،کیا میں گھر جاو¿ں؟ یہ عوام کی عدالت ہے سنو کیا کہہ رہی ہے، عوام نے ووٹ دیا ہے۔

وسیم اختر نے کہا کہ کیا میرے جانے سے کراچی کو پانی مل جاتا ہے تو میں فوراً استعفی دے دیتا ہوں، جیل سے الیکشن جیتا ہے اور دنیا کا واحد میئر ہوں جس نے جیل سے الیکشن جیتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ میرے اوپر ایک دن میں 40 ایف آئی آر کٹیں،کیا عدلیہ کو یہ نظر نہیں آتا، میری پیٹیشن پر فیصلے کیوں نہیں سناتے؟ چیف جسٹس صاحب آپ 30 اگست سے پہلے میری پیٹیشن پر فیصلہ سنائیں۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -