لوگوں سے سوال پوچھا جائے تو  نیب پر پتھراؤ کیا جاتا ہے لیکن اب ۔۔۔وزیر اعظم کے معاون خصوصی علی نواز اعوان نےاپوزیشن کو خبردار کردیا 

لوگوں سے سوال پوچھا جائے تو  نیب پر پتھراؤ کیا جاتا ہے لیکن اب ۔۔۔وزیر اعظم ...
لوگوں سے سوال پوچھا جائے تو  نیب پر پتھراؤ کیا جاتا ہے لیکن اب ۔۔۔وزیر اعظم کے معاون خصوصی علی نواز اعوان نےاپوزیشن کو خبردار کردیا 

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیر اعظم کےمعاون خصوصی علی نواز اعوان نےکہاہےکہ وزیر اعظم نےحقیقت میں ثابت کیا کہ وہ کشمیر کے سفیر ہیں،وزیر اعظم عمران خان کی وجہ سے مودی پوری دنیا میں بے نقاب ہو چکا ہے، کشمیر اب پاکستان کے نقشے میں شامل ہو چکا ،جلد مسئلہ کشمیر بھی حل ہو جائے گا،کچھ لوگوں سے سوال پوچھا جائے تو  نیب پر پتھراؤ کیا جاتا ہے،اسلام آباد میں شجر کاری مہم کا آغاز کر دیا گیا، 1 لاکھ پودے لگائے جائیں گے۔

نجی ٹی وی کے مطابق اسلام آباد میں تقریب سےخطاب کرتےہوئےمعاون خصوصی علی نواز اعوان نے کہا کہ وزیراعظم ہمارےبچوں کےمستقبل کے بارے میں سوچ رہے ہیں،ہمارا ملک گلوبل وارمنگ کا شکار ہو رہا تھا،موسمیاتی تبدیلی کے نقصانات سے پجنے کے لیے ہم نے اہداف حاصل کر لیے ہیں، ہم جشن آزادی کے دن کو شجرکاری کر کے منا رہے ہیں کیونکہ ہمارے آج کے لیے ہماری نسلوں نے قربانی دی اور اب ہمیں آنے والے کل کے آج کام کرنا ہے،

کلین اینڈ گرین پاکستان کے اقدام کو پوری دنیا میں سراہا جا رہا ہے۔علی نواز اعوان نے کہا کہ اسلام آباد میں تاریخی ترقیاتی کاموں کا آغاز کر دیاہے، ہم نے ایک لاکھ پودے لگانے کا ٹارگٹ رکھا گیا،ہمارا کام قوم کی خدمت کرنا ہے وہ کر رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ کچھ لوگوں سے سوال پوچھا جائے تو  نیب پر پتھراؤ کیا جاتا ہے لیکن یاد رکھیں قوم اور سپریم کورٹ کو لوٹے گئے مال کا حساب دینا ہو گا، حکومت غریب مزدوروں کے ساتھ کھڑی ہے، آج سے پہلے غریب طبقے کا کسی نے نہیں سوچا ۔انہوں نے کہا کہ کشمیر پر پہلی مرتبہ  تین دفعہ سلامتی کونسل کا اجلاس بلایا گیا،  وزیراعظم عمران خان کی وجہ سے مودی پوری دنیا میں بے نقاب ہو چکا ہے،وزیر اعظم نے حقیقت میں ثابت کیا کہ وہ کشمیر کے سفیر ہیں،مودی نے اپنے ہی آئین کی دھجیاں اڑائی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بھارت میں تاریخ میں پہلی بار عوام کے حقوق سلب کرنے کے لیے قانون سازی کی گئی، کشمیر اب نقشے میں شامل ہو چکا جلد مسئلہ کشمیر حل ہو جائے گا۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -