چینی بحران پیدا کرنیوالی شوگر ملز  پر 44ارب روپے جرمانہ عائد

     چینی بحران پیدا کرنیوالی شوگر ملز  پر 44ارب روپے جرمانہ عائد

  

 اسلام آباد، لاہور(سٹاف رپورٹر)مسابقتی کمیشن آف پاکستان(سی سی پی) شوگرملز ایسوسی ایشن پر 44ارب روپے کا جرمانہ کردیا،اعلامیے کے مطابق سی سی پی نے شوگر ملز پر مسابقتی ایکٹ کی خلاف ورزی پر جرمانہ عائد کیا اور ایسوسی ایشن کو 2ماہ میں جرمانیکی رقم ادا کرنیکی ہدایت کی،اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ سی سی پی نے شوگر ملز کے خلاف تحقیقات کیں، شوگر ملز کو گٹھ جوڑ کے ذریعے چینی کی قیمت مقررکرنے پرجرمانہ عائد کیاگیا،اعلامیے کے مطابق شوگر ملز کو گٹھ جوڑ کے ذریعے یوٹیلٹی اسٹورز کا کوٹہ حاصل کرنے اور گٹھ جوڑ کے ذریعے چینی برآمد کرنے پرجرمانہ عائد کیا گیا،مسابقتی کمیشن کے اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ کمیشن کے دو ممبران نے فیصلے کے حوالیسے اختلافی نوٹ دیا تاہم چیئرپرسن سمیت دو ممبران نے فیصلے کے حق میں ووٹ دیا،ووٹ برابرہونے پر چیئرپرسن نے دوسری بار اپنا ووٹ فیصلے کے حق میں دیا،سی سی پی نے پہلی مرتبہ سب سے زیادہ 44 ارب روپے سے زائد کا جرمانہ عائدکیا۔ پاکستان شوگر ملزایسوسی ایشن نے کہا ہے کہ مسابقتی کمیشن پاکستان کا فیصلہ نہ ہی اکثریت اور نہ ہی متفقہ فیصلہ ہے،دو ممبران نے پاکستان شوگر ملز ایسوسی ایشن کے ممبران کے حق میں فیصلہ دیا اور لکھا ہے کہ موجودہ معلومات ناکافی ہیں اور اس سے کسی پارٹی پر کوئی الزام ثابت نہیں ہوتا۔ شوگرملزایسوسی ایشن کی جانب سے جاری کردہ بیان کے مطابق مسابقتی کمیشن پاکستان کے دو ممبران نے پاکستان شوگر ملز ایسوسی ایشن یا ان کے کسی ممبر پر کوئی جرمانہ عائد کرنے کا فیصلہ نہیں دیا،کمیشن کا فیصلہ دراصل دو،دو ممبران کے درمیان تقسیم ہے،دو ممبران نے پاکستان شوگر ملز ایسوسی ایشن کے حق اور دو نے ان کے خلاف فیصلہ دیا۔انہوں نے کہا کہ مسابقتی کمیشن پاکستان کی چیئر پرسن نے اپنے اختیارات کا استعمال کرتے ہوئے اپنا ایک اضافی ووٹ کاسٹ کیا جو کہ معاملات کی نزاکت کو دیکھتے ہوئے اور قانونی طور پر بھی ایک سوالیہ نشان ہے۔

  چینی

مزید :

صفحہ اول -