ڈیرہ، خاتون محتسب کا کیمپ آفس فعال، مختلف کیسوں کی سماعت

  ڈیرہ، خاتون محتسب کا کیمپ آفس فعال، مختلف کیسوں کی سماعت

  

 ڈیرہ غازیخان(سٹی رپورٹر)ڈپٹی کمشنر آفس میں خاتون محتسب کا (بقیہ نمبر8صفحہ18پر)

کیمپ آفس فنکشنل کردیا گیا جہاں خواتین کے پراپرٹی اور ہراسمنٹ کے کیس ماہانہ بنیاد پر سنے جائیں گے خاتون محتسب پنجاب نبیلہ حاکم خان نے ڈیرہ غازی خان کا دورہ کیاایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو احمد حسن رانجھا،کنسلٹنٹ عبیدالرشید،نائب صدر بار رقیہ رمضان اور دیگر موجود تھے خاتون محتسب پنجاب نبیلہ حاکم خان نے ایک ہراسمنٹ اور چار پراپرٹی کیس کی سماعت کی اور فریقین کے موقف سنے۔خاتون محتسب پنجاب نے پٹواری چچا کی طرف سے وراثتی جائیداد نہ دینے پر ڈپٹی کمشنر مظفر گڑھ کو ریونیو آفیسر کے خلاف کارروائی کی ہدایات کی۔روہیلانوالی کے پٹواری ظفر اقبال نے اپنی بھتیجی طاہرہ بی بی کو وراثتی جائیداد نہیں دی۔خاتون محتسب نے ایک اور کیس کی سماعت کرتے ہوئے سائلہ عمارہ بی بی کی سکیورٹی کیلئے ڈپٹی کمشنر کو ہدایات جاری کیں۔خاتون محتسب پنجاب نبیلہ حاکم خان نے کہا کہ ویمن پراپرٹی رائٹ ایکٹ 2021 نے خاتون محتسب کو بااختیار بنادیاخواتین کے جائیداد کے مسائل سپیڈی ٹرائلز کرکے حل کریں گے۔وراثتی جائیداد کا تحفظ کیا جائیگا۔وراثتی حقوق،رجسٹری،قبضہ،کرایہ سمیت دیگر قوانین پر عملدرآمد کرایا جائیگا۔ایکٹ کے تحت وراثتی زرعی اراضی پر قبضہ پر پیداوار اٹھانے کا خرچہ خاتون کو دلایا جائیگا۔دریں اثناء ڈیرہ غازی خان میں خاتون محتسب،حقوق نسواں اور قوانین کے حوالے سے آگاہی سیمینار کا انعقاد کیا گیا جس میں وزیر مملکت برائے موسمیاتی تبدیلی زرتاج گل وزیر،خاتون محتسب پنجاب نبیلہ حاکم خان اور دیگر نے خواتین کی ہراسمنٹ،وراثتی جائیداد کے تحفظ اور خاتون محتسب پنجاب کے دائرہ اختیار کے حوالے سے آگاہی دی.وزیر مملکت برائے موسمیاتی تبدیلی زرتاج گل وزیر نے نے سمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کہ ڈیرہ غازی خان میں حقوق نسواں اور تحفظ کیلئے پہلا ادارہ قائم کرنے جارہے ہیں جینڈر ایکوالیٹی ادارہ کیلئے پچاس کروڑ روپے منظور کرلئے ہیں اس سال کی اے ڈی پی میں فنڈز مختص کردئیے گئے جگہ کا انتخاب  جلد کرکے تعمیراتی کام شروع کردیا جائیگا۔ہیلپ لائن سے رابطہ پر پانچ منٹ کے اندر خاتون کو مدد فراہم کردی جائے گی۔ہراسمنٹ کی تمام اقسام پر کام کریں گے۔اینٹی ریپ لاء میں ترمیم کردی ہے اب جنسی استحصال کرنے والوں کی رجسٹریشن کرکے ریکارڈ تیار کیا جائیگا۔سپیشل کوررٹس قائم ہوں گی خاتون ججز تعینات کرکے خصوصی تربیت کی جائے گی۔وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان احمد خان بزدار نے ڈیرہ غازی خان میں خاتون محتسب پنجاب کا کیمپ آفس فنکشنل کرکے احسن اقدام کیا۔گزشتہ حکومتوں نے انسانی اور خواتین کے حقوق کے تحفظ کیلئے صرف کھوکھلے نعرے لگائے۔زرتاج گل وزیر نے کہا کہ خواتین اپنے حقوق جانیں اور ان کے تحفظ کیلئے جدوجہد کریں خاتون محتسب پنجاب نبیلہ حاکم خان نے کہا کہ یہ تاثر غلط ہے کہ صرف مردوں کو سزا دینے کیلئے خاتون محتسب کا ادارہ قائم کیا گیا۔انہوں نے کہا کہ قانون نے خاتون محتسب کو بااختیار بنادیا ہے ملازمت کی جگہ پر ہراسمنٹ ثابت ہونے پر جرمانہ،سالانہ ترقی روکنے،تنزلی،معطلی اور ملازمت سے برخواست گی کی سزائیں دی جاسکتی ہیں۔متاثرہ خواتین براہ راست، ڈاک اور آن لائن درخواست دے سکتی ہیں۔کھلی کچہریاں بھی لگائیں گے۔کسی بھی خاتون کا حق سلب نہیں ہونے دیں گے۔وراثتی جائیداد کا تحفظ کیا جائیگا۔سیمینار سے اسسٹنٹ کمشنر صدر مہدی ملوف، کنسلٹنٹ عبدالرشید،حافظ عثمان،رقیہ رمضان،بشری سعید اور دیگر نے بھی خطاب کیا۔اس موقع پر خواتین اور مرد موجود تھے. 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -