جینز پہننے والی لڑکیوں سے کوئی شادی کرنا پسند نہیں کریگا،بھارتی وزیر کامتنازع بیان

جینز پہننے والی لڑکیوں سے کوئی شادی کرنا پسند نہیں کریگا،بھارتی وزیر ...
جینز پہننے والی لڑکیوں سے کوئی شادی کرنا پسند نہیں کریگا،بھارتی وزیر کامتنازع بیان

  

نئی دہلی(ویب ڈیسک) بھارت کے یونین وزیر نے لڑکیوں کے لباس پر متنازع بیان دیتے ہوئے کہا کہ جینز زیب تن کرنےوالی لڑکیوں سے کوئی لڑکا شادی کرنا پسند نہیں کرے گا۔بھارت کے مرکزی وزیر ستیپال سنگھ نے یہ متنازع بیان اترپردیش میں طلبا کی ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے دیا،انہوں نے دعویٰ کیا کہ کوئی لڑکا اس لڑکی سے شادی نہیں کرے گا جو شادی کے منڈپ پر جینز پہن کر آئے گی، وہ بھارت کی ثقافت کے لحاظ سے ملبوسات کے موزوں ہونے پر بات کررہے تھے ، ان کے بیان کی وڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہے جس پر انہیں لوگ تنقید کا نشانہ بنا رہے ہیں، وزیر کا کہنا تھا” کہ کوئی آدمی اگر کہنے لگے کہ میں جینز پہن کے کسی مندر کا مہانت یا سرپنچ بن جاﺅں گا تو لوگ پسند کریں گے؟ کوئی پسند نہیں کرے گا،یا کوئی لڑکی جینز پہن کر کے شادی کی بیدی پر جائے گی تو کتنے لڑکے اس سے شادی کرنا چاہیں گے۔

ڈیلی پاکستان کے یو ٹیوب چینل کو سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

“ برطانوی نشریاتی ادارے کی ایک رپورٹ کے مطابق بھارتی وزرا یا بااثر افراد کی طرف سے یہ کوئی پہلی بار خواتین کے لباس کے متعلق بیان نہیں آیا بلکہ ماضی میںاکثر ایسے بیانات سامنے آتے رہے ہیں اور وہ ریپ کی اصل وجہ خواتین کا مختصر لباس کو سمجھتے ہیں۔ گزشتہ برس وزیر ثقافت منیش شرما نے بھی خواتین کے لباس کے متعلق ایسا ہی بیان دیا،انہوں نے غیر ملکی خواتین کو مشورہ دیا کہ بھارت کا دورہ کرنے والی خواتین سکرٹس نہ پہنیں۔

مزید : بین الاقوامی