’اب تم یہ کام نہیں کر سکو گی‘ شوہر نے اپنی نوجوان دلہن کے دونوں ہاتھ کلہاڑی سے کاٹ ڈالے، کس کام سے روکنا چاہتا تھا؟ جان کر مرد بھی لرز اُٹھیں

’اب تم یہ کام نہیں کر سکو گی‘ شوہر نے اپنی نوجوان دلہن کے دونوں ہاتھ کلہاڑی ...
’اب تم یہ کام نہیں کر سکو گی‘ شوہر نے اپنی نوجوان دلہن کے دونوں ہاتھ کلہاڑی سے کاٹ ڈالے، کس کام سے روکنا چاہتا تھا؟ جان کر مرد بھی لرز اُٹھیں

  

ماسکو(مانیٹرنگ ڈیسک) ناجائز تعلقات کے شبے میں بیویوں کو وحشیانہ تشدد کا نشانہ بنانا قدامت پرست معاشروں کا خاصا ہے لیکن بسااوقات ترقی یافتہ ملکوں سے ایسی ہولناک خبر آ جاتی ہے کہ قدامت پرست معاشروں کے مرد بھی لرز کر رہ جاتے ہیں۔ اب ایسی ہی ایک خبر روس سے سامنے آئی ہے جہاں ایک شوہر نے ناجائز تعلقات کے شبے میں اپنی بیوی کے ہاتھ ہی کاٹ ڈالے ہیں۔

دی مرر کی رپورٹ کے مطابق 26سالہ دمتری گراکیوف نامی ملزم کو اپنی بیوی مارگریٹا کے کردار پر شبہ ہوا جس پردونوں میں جھگڑا ہو گیا۔ دمتری اگلے روز مارگریٹا کو جنگل میں لے گیا اور وہاں کلہاڑے سے اس کے دونوں ہاتھ کاٹ ڈالے اور پھر خود ہی اسے ہسپتال پہنچایا اور خود کو پولیس کے حوالے کر دیا۔مارگریٹا نے پولیس کو بتایا کہ اس کے کسی سے تعلقات نہیں تھے، دمتری کا شک غلط تھا۔ اس نے میرے ہاتھ کاٹتے ہوئے کہا کہ اب تم کبھی کسی کو میسج نہیں کر سکوں گی۔“

’میں 9 ماہ کی حاملہ تھی، فوجی ہمارے گھر میں داخل ہوئے اور میرا ریپ کردیا، اس کے بعد میرا شوہر میرے پر بری طرح برس پڑا کیونکہ اس کے مطابق۔۔۔‘ روہنگیا خاتون کی وہ داستان جو غیر مسلموں کو بھی خون کے آنسو رُلادے

دونوں کے دوستوں کا کہنا ہے کہ دراصل مارگریٹا اپنے شوہر کو طلاق دینے کی تیاری کر رہی تھی جس کی وجہ سے اس نے مارگریٹا کے ساتھ یہ سلوک کیا اور اس کے ہاتھ کاٹ ڈالے ۔ ایک دوست کا کہنا تھا کہ ”دمتری نے ایک روز قبل مجھے کہا تھا کہ میں مارگریٹا کو طلاق نامے پر دستخط کرنے کے قابل نہیں چھوڑوں گا۔“رپورٹ کے مطابق ڈاکٹر دو بچوں کی ماں مارگریٹا کا ایک ہاتھ واپس جوڑنے میں کامیاب ہو گئے تاہم دوسرا نہیں جوڑا جا سکا۔ دمتری کے خلاف عدالت میں مقدمہ زیرسماعت ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس