پاکستان اور شمالی کوریا جیسے ممالک کیساتھ کام کرنا پر لطف نہیں ، ریکس ٹلرسن

پاکستان اور شمالی کوریا جیسے ممالک کیساتھ کام کرنا پر لطف نہیں ، ریکس ٹلرسن

 واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک )امریکی وزیر خارجہ ریکس ٹلرسن نے سفارتکاری کو کٹھن اور صبر طلب کام قرار دیتے ہوئے کہا ہے پاکستان جیسے ملک کیساتھ کام کرنا پْرلطف نہیں،امریکی محکمہ خارجہ کے حکام کیساتھ ٹاون ہال میٹنگ کے دوران جب ان سے سوال کیا گیا کیا وہ امریکی محکمہ خارجہ کی ذمہ داریاں نبھانے سے خوش ہیں تو ریکس ٹلرسن کا کہنا تھا خوش رہنا سیکھ رہا ہوں۔ اسوقت امریکہ کو درپیش سب سے بڑا چیلنج شمالی کوریا تنازع سے نمٹنا ہے، لیکن پاکستان اور شمالی کوریا جیسے ممالک کیساتھ کام کرنا پر لطف نہیں ہے۔ امریکہ کو شمالی کوریا اور دوسرے بڑ ے تنازعات کے حل میں واضح کامیابیاں حاصل نہیں ہو سکیں لیکن سفارتکاری اتنا آسان کام نہیں، بین الاقوامی معاملات کی پیچیدگی اسے مزید مشکل کام بنا دیتی ہے، ان کا کام محکمہ خارجہ کی کارکردگی کو مؤثر بنانا ہے جس کیلئے وہ کوشاں ہیں۔ وہ اپنی ذمہ داریوں کو احسن طریقے سے سرانجام دیتے ہوئے خوش رہنا سیکھ رہے ہیں۔یاد رہے ریکس ٹلرسن نے اکتوبر میں پاکستان کا دورہ کیا تھا جس میں انہوں نے پاکستان کی سول اور عسکری قیادت سے مشترکہ ملاقات کی تھی۔ریکس ٹلرسن کا پاکستانی حکام سے ملاقات میں کہنا تھا پاکستان خطے میں امن اور مشترکہ مفادات کے حصول کیلئے ہمارے لیے اہمیت کا حامل ہے۔

مزید : علاقائی