مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے پاکستان کی سیاسی جماعتیں متفق ہیں ، راجہ ظفر الحق

مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے پاکستان کی سیاسی جماعتیں متفق ہیں ، راجہ ظفر الحق

 اسلا م آباد(آن لائن) سینیٹ میں قائد ایوان راجہ محمد ظفرالحق نے کہا ہے کہ مسئلہ کشمیر کے حل کے حوالے سے پاکستان کی تمام سیاسی جماعتیں ایک موقف پر قائم ہیں، مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ کی قراردادوں اور کشمیر ی عوام کی اْمنگوں کے مطابق حل کیا جائیگا،بھارت نے کشمیر میں جس طرح ظلم و بربریت کا بازار گرم کر رکھا ہے اس کی مثال دنیا میں کہیں نہیں ملتی،بھارت مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی گزشتہ70برسوں سے پامالی کر رہا ہے۔ بھارت اقوام متحدہ کا رکن ملک ہونے کے باوجود اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عملدرآمد نہیں کر رہا۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے کشمیر کے ادارہ برائے بین الاقوامی تعلقات کے زیر اہتمام بین الاقوامی انسانی حقوق کے دن کے حوالے سے منعقدہ سیمینارسے مہمان خصوصی کی حیثیت سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔سینیٹر راجہ محمد ظفرالحق نے اس بات پر زور دیا کہ مسئلہ کشمیر کی بین الاقوامی سطح پر زیادہ سے زیادہ موثر میں تشہیر کی جائے اور اس کیلئے انہوں نے تجویز دی کہ ایک ایڈوائزری گروپ بنایا جائے جس میں پاکستان کے سابق سفراء عبدالباسط ، منیر اکرام و دیگر کو شامل کیا جائے۔سینیٹر شیری رحما ن نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان سے بھارت کو مسئلہ کشمیر کے حوالے سے د وٹوک جواب جاناچاہیے، مسئلہ کشمیر کے حوالے سے ہماری کسی بھی سیاسی جماعت نے پالیسی میں کوئی تبدیلی نہیں کی۔ مسئلے کا حل اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے مطابق ہونا چاہیے اور ہماری جماعت نے ہمیشہ مسئلہ کشمیر کو بنیادی اہمیت دی ہے۔ بھارت اپنے ذاتی اثرو رسوخ کو استعما ل میں لاتے ہوئے مسئلہ کشمیر کو ذاتی مسئلہ بنانے کے درپے ہے۔سابق سفیر عبدالباسط نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر ی عوام نے جس طرح گزشتہ 70 برسوں سے جدوجہد جاری رکھی ہے ان کا حق خود ارادیت ختم نہیں کیا جا سکتا۔ بھارت مسئلہ کشمیر کو حل کرنے کی بجائے تاخیری حربے استعمال کر رہا ہے تاکہ کیس کو کمزور کیا جا سکے۔ تقریب سے حریت رہنماؤں اور کشمیر کے صحافیوں نے بھی خطاب کرتے ہوئے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کی شدید الفاظ میں مذمت کی۔تقریب کے آخر میں مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے سینیٹر راجہ محمد ظفرالحق نے دعا بھی کرائی۔

مزید : علاقائی