امریکہ، اسرائیل بیت المقدس سے متعلق ہم سے کوئی توقعات نہ رکھیں: یورپی یونین

امریکہ، اسرائیل بیت المقدس سے متعلق ہم سے کوئی توقعات نہ رکھیں: یورپی یونین

برسلز ( آن لائن ) یورپی یونین نے دوٹوک الفاظ میں اسرائیلی وزیراعظم کے اس بیان کی شدید مذمت کی ہے جس میں انہوں نے کہا تھا کہ یورپی ممالک بیت المقدس سے متعلق امریکی فیصلے کی حمایت کرے۔یورپی یونین کے خارجہ امور کی نگران فیڈیریکا موگیرینی نے کہا ہے شہر کی مقدس حیثیت پر تبدیلی قبول نہیں کی جائے گی۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے بیت المقدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کر نے فیصلے کے بعد اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو نے کہا تھا ٹرمپ نے حقائق میز پر رکھے ہیں۔ برسلز میں گزشتہ روز یورپی یونین کے وزرائے خا ر جہ سے ملاقات میں اسرائیلی وزیراعظم نے کہا تھا وہ امید کرتے ہیں تمام یورپی ممالک امریکی فیصلے کی توثیق کریں ۔اسرائیلی وزیراعظم کے بیان پر 28 یورپی ممالک کے خارجہ امور کی نگران فیڈیریکاموگیرینی نے دوٹوک جواب دیااسرائیل ہم سے کسی بھی قسم کی توقعات نہ ر کھے۔یورپی یونین فلسطین کو امداد فراہم کرتا ہے اور بیت المقدس کے معاملے پر عالمی رائے شماری کا احترام کرے گا۔انہوں نے زور دیا کہ اسرائیل اور فلسطین کے درمیان دو طرفہ امن کیلئے ضروری ہے بیت المقدس کو دونوں ممالک (اسرائیل اور فلسطین) کا دارالحکومت رہنے دیا جائے جو بنیادی طور پر عرب اسرائیل جنگ 1967 کے بعد کیا گیا تھا۔واضح رہے یورپی ممالک کی جانب سے امریکی فیصلے کی تائید نہ کرنے پر اسرائیلی وزیراعظم نے یورپی ممالک کو ‘منافق ’ قرار دیا تھا۔

مزید : صفحہ اول