نوشہرہ میں جے یو آئی (ف ) کا امریکی فیصلے کیخلاف کل مظاہرہ ہوگا

نوشہرہ میں جے یو آئی (ف ) کا امریکی فیصلے کیخلاف کل مظاہرہ ہوگا

نوشہرہ(بیورورپورٹ)نوشہرہ میں جمعیت علماء اسلام (ف) کے زیراہتمام آل پارٹیز کانفرنس نے بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالخلافہ قراردینے کو اسرائیل اور امریکہ کے گٹھ جوڑ کے خلاف کل بروز جمعہ دو بجے نوشہرہ کینٹ شوبراچوک میں زبردست احتجاجی جلوس اور جی ٹی روڈ کو بلاک کرنے اور دھرنا دینے کااعلان کردیا ضلع نوشہرہ کے عوام اور تاجر برادری احتجاجی جلسے میں بھرپور شرکت کرکے فلسطینی عوام سے اظہار یکجہتی کریں اس سلسلے میں جمعیت علماء اسلام (ف)کے ضلعی دفتر نوشہرہ کینٹ میں نوشہرہ آل پارٹیز کانفرنس منعقد ہوئی جس میں جمعیت علماء اسلام کے رہنما الحاج پرویز خٹک ون، قاری محمداسلم، قاری محمدعمر علی، مفتی حاکم علی،جمعیت لائر فورم کے سعداللہ ایڈوکیٹ، مسلم لیگ ن کے مشیت الرحمن، محمدحمزہ خان، جماعت اسلامی کے افتخار احمدخان، مولانا سمیع الرحمان یوسفی، حاجی عنایت الرحمان، جمعیت علماء اسلام پاکستان کے فرید اللہ، مولانا فضل غنی، حاجی انورالاسلام، مولانا فریداللہ حقانی، پی پی پی کے ملک غلام حضرت، محمدارشد، انجمن تاجران کے سعید اللہ ایڈوکیٹ، ارشد، اے این پی کے انجینئر طارق خٹک، قومی وطن پارٹی کے دانیال پراچہ اور دیگر نے شرکت کی آل پارٹیز کانفرنس سے مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ فلسطینی عوام پر اسرائیل اپنی جارحیت برقرار رکھی ہوئی ہیں اور مظلوم فلسطینی عوام پر انسانیت سوز ظلم وستم کے پہاڑ ڈائیے ہوئے ہیں پاکستان سمیت پوری امت مسلمہ اسرائیل کے خلاف او آئی سی اجلاس بلا کر ان کے خلاف قرار داد پیش کریں کیونکہ ان کی چیخ وپکار پوری دنیا سن رہی ہے لیکن ان کے لئے ابھی تک نہ تو اسلامی ممالک اور نہ اقوام متحدہ نے عملی طورپر کسی قسم کے اقدام کااعلان نہیں کیا بیت المقدس مسلمانوں کا قبلہ اول تھا اور رہے گا لیکن افسوس کی بات ہے کہ پاکستان ، امت مسلمہ سمیت پوری دنیا فلسطینی عوام کیلئے کچھ نہیں کررہے ہیں فلسطینی عوام بیت المقدس کی آزادی کیلئے امریکہ اور اسرائیل کے خلاف اکیلے جنگ لڑ رہے ہیں مقررین نے کہا کہ پاکستان سمیت پوری عالم اسلام امریکہ سے سفارتی تعلقات ختم کریں ان پر تیل کی سپلائی بند کردے اور امریکہ کے بنیکوں میں پڑی ہوئی دولت نکلوائیں تاکہ ان کو مسلمانوں کی طاقت کااندازہ ہوسکے انہوں نے مزید کہا کہ نوشہرہ کے غیور عوام نوشہرہ کے آل پارٹیز کانفرنس کے احتجاج میں بھرپور شرکت کرکے یہ ثابت کریں کہ فلسطینی عوام قبلہ اول کی آزادی کی جنگ میں تنہا نہیں پاکستانی عوام ان کے اس جدوجہد میں برابر کے شریک ہیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر