چینی سرمایہ کاری سے نئی صنعتوں کا قیام خوش آئند ہے، پیاف

  چینی سرمایہ کاری سے نئی صنعتوں کا قیام خوش آئند ہے، پیاف

  

لاہور (لیڈی رپورٹر)چیئرمین پاکستان انڈسٹریل اینڈ ٹریڈرز ایسوسی ایشنز فرنٹ (پیاف) لاہور چیمبر کے سابق سیئنر نائب صدر  اور سابق وزیر محنت، لائیو اسٹاک، ڈیری اورٹرانسپورٹ کے وزیرمیاں نعمان کبیر نے لاہور میں چین کے قونصل جنرل لانگ ڈنگبن سے ون ٹو ون ملاقات کرتے ہوئے کہاکہ  چینی سرمایہ کاروں کا مختلف شعبوں میں سرمایہ کاری سے نئی صنعتوں کا قیام عمل میں آئے گا،چینی سرمایہ کاروں کے جانب سے نئی اقتصادی زونز کے قیام اور نئی انڈسٹریز سے پاکستان کا بیرون ممالک وقار بلند ہوگا اور غیر ملکی سرمایہ کاروں کی پاکستان میں سرمایہ کاری کی حوصلہ افزائی ہوگی۔پاک چائینہ تعاون کے تناظر میں ان معاہدوں پر عملدرآمد کی ایک نئی تاریخ رقم کی جارہی ہے۔پچھلے ایک سال کے دروان پاکستان میں چینی سرمایہ کاری کا حجم دوگنا ہونے پر ملکی معاشی صورتحال کے لیے خوش آئند قرار دیتے ہوئے نعمان کبیر نے کہا کہ چینی سرمایہ کاروں کی جانب سے زیادہ تر سرمایہ کاری توانائی کے شعبے میں ہورہی ہے جس سے صنعتی پہیہ مسلسل رواں دواں ہونے سے اور چینی سرمایہ کاروں کی جانب سے مختلف شعبوں میں سرمایہ کاری ملک کو ترقی کی راہوں پرگامزن کرے گی۔ میاں نعمان کبیر نے چین پاکستان تعلقات، چین پاکستان اقتصادی راہداری اور زرعی تعاون جیسے امور پر تبادلہ خیال کیا۔اس موقع پر چین کے قونصل جنرل لانگ ڈنگبن نے کہا کہ گذشتہ چھ برسوں کے دوران چین پاکستان اقتصادی راہداری کی تعمیر سے پاکستان کے بنیادی ڈھانچے کے حالات اور توانائی کی فراہمی میں بہت زیادہ بہتری آئی ہے۔

 جب راہداری کی تعمیر دوسرے مرحلے میں داخل ہورہی ہے تو، زراعت تعاون کی توجہ کا مرکز بن گیا ہے۔ اصلاحات اور افتتاحی آغاز کے 41 برسوں میں، چین کی زرعی سائنس اور ٹکنالوجی نے تیزی سے ترقی کی ہے، جس نے 1.3 بلین افراد کے کھانے اور لباس کے مسئلے کو کامیابی کے ساتھ حل کیا۔ آج کل، چینی عوام کی اعلی معیار کی زرعی مصنوعات کی طلب میں اضافہ ہورہا ہے، اور دونوں ممالک کے مابین زرعی تعاون کو زبردست امکانات اور نادر مواقع میسر ہیں۔ چینی قونصلیٹ جنرل پاکستانی صنعت اور تجارتی محاذ کی مکمل حمایت، پڑوسی صوبوں اور چین کے مابین تمام شعبوں خصوصا زراعت میں تعاون کو فروغ دینے پر راضی ہیں، دونوں لوگوں کو فائدہ پہنچائیں گے، اور چین اور پاکستان کے مابین روایتی دوستی کو مزید گہرا کرنے کے لئے کوشیش جاری رکھیں گے۔چیئرمین پیاف میاں نعمان کبیر نے پاکستان کی معیشت کو ترقی دینے میں مدد کرنے پر چین کا اظہار تشکر کیا اور امید ظاہر کی کہ لاہور میں چینی قونصلیٹ جنرل نمائش کے مذاکرات، سائنسی اور تکنیکی مدد، اور پروجیکٹ ڈاکنگ کے ذریعے دونوں طرف سے زرعی کاروباری اداروں کے لئے مضبوط تعاون اور تعاون کے پلیٹ فارم کی فراہمی جاری رکھے گا تاکہ پاکستان کو زرعی اپ گریڈ حاصل کرنے، کسانوں کی آمدنی میں اضافہ، اور دیہی استحکام میسر ہو سکے

مزید :

کامرس -