مظفر گڑھ میں وکلاء اور عدالتی عملے کے درمیان تنازعہ ختم

    مظفر گڑھ میں وکلاء اور عدالتی عملے کے درمیان تنازعہ ختم

  

مظفرگڑھ(بیورو رپورٹ،نامہ نگار)سیشن جج مظفر گڑھ نے وکلا نمائندگان سے مل کر عدالتی عملہ اور وکلاء کے معاملہ کو نمٹا دیا.ذمہ داران کے خلاف کارروائی کی یقین دہانی, ڈسٹرکٹ بار ایسوسی(بقیہ نمبر42صفحہ12پر)

ایشن مظفرگڑھ نے بار کے رکن شہباز علی ایڈووکیٹ پر عدالتی بیلف عبدالرشید اور جعفر حسین کی طرف سے قاتلانہ حملہ کرنے, اور لاہور میں ڈاکٹروں اور پولیس کی جانب سے وکلاء پر تشدد کرنے کے خلاف اور واقعہ لاہور میں وکلاء سے اظہار یک جہتی کے لئے پنجاب بار کونسل کی اپیل اور فیصلے کے مطابق جمعہ کو فل ڈے ہڑتال کی اور ایوان عدل اور بار روم کے سامنے احتجاج کیا. وکلاء نے ڈاکٹرز اور پنجاب پولیس کے خلاف مظاہرہ کیا اور نعرے بازی کی. وکلاء اور بار عہدے داران صدر بار مہر اعجاز احمد, جنرل سیکرٹری ظفر اقبال انصاری, ممبران پنجاب بار کونسل جام محمد یونس,سید منصور احمد شاہ, ملک جنید وجدانی, میاں محمد ارشد بھٹی, شہباز احمد خان, ملک صفدر حسین پہوڑ, راؤ یاسر علی خان, رانا امجد علی امجد, سردار اللہ نواز,زبیر سہرانی,حارث خان, مظہر حسین, ارشد ڈب, آزاد بخت خان, مہر عمر بن غفور,ملک نقی کمبوہ, ارشد نعیم اور دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پولیس اور ڈاکٹرز نے پرامن وکلاء پر تشدد کیا جو قابل مذمت ہے.اس موقع پر کسی بھی مزید ناخوشگوار واقعہ سے نمٹنے کے لئے پولیس کی بھاری نفری جمعہ کوضلع کچہری اور ایوان عدل میں موجود رہی. جس نے ضلع کچہری اور جوڈیشل کمپلیکس کو گھیرے میں لئے رکھا. جبکہ جمعہ کے روز سیشن جج مظفرگڑھ صہیب احمد رومی, ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر مظفرگڑھ سید ندیم عباس, سینئر سول ججز عمران صفدر, عمر فاروق اعوان,ڈی ایس پی سٹی عظمت اللہ گرمانی کے ہمراہ بار روم میں آئے اور وکلاء کو یقین دلایا کہ وکلاء کے مطالبات مان لئے گئے ہیں. انہوں نے مظفرگڑھ واقعہ پر افسوس کا اظہار کیا. انہوں نے بتایا کہ وکیل پر حملے میں ملوث کانسٹیبل جعفر حسین کو معطل کر کے تبدیل کر دیا گیا ہے.اس موقع پر صدر بار مہر اعجاز احمد, جنرل سیکرٹری ظفر اقبال انصاری, ممبران پنجاب بار کونسل جام محمد یونس, سید منصور احمد شاہ,واجد نواز خان, سید غلام عباس شاہ اور وکلاء کی کثیر تعداد موجود تھی.سیشن جج نے کہا کہ ہڑتال اور مظاہرہ کرنے اور وکلاء کے خلاف اشتعال انگیز نعرے بازی کرنے والے عدالتی اہلکاروں کے خلاف تادیبی کارروائی عمل میں لائی جائے گی. اس کے بعد وکلاء اور بار عہدے داران نے مظفرگڑھ میں عدالتی اہلکاروں کے خلاف جاری احتجاج ختم کرنے کا اعلان کیا تاہم لاہور واقعہ کے خلاف احتجاج جاری رہے گا. دریں اثناء مظفرگڑھ بار نے ہفتہ کو بھی لاہور اور اسلام آباد, راولپنڈی کے وکلاء سے اظہار یک جہتی کے لئے اور لاہور میں وکلاء کی گرفتاریوں کے خلاف فل ڈے ہڑتال اور عدالتی بائی کاٹ کا اعلان کیا ہے.

تنازعہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -