نواز شریف کے پلیٹ لیٹس کا معاملہ معمہ بن کر رہ گیا لیکن کیا زہر دیئے جانے کا خدشہ ہے یا نہیں؟ برطانوی ڈاکٹر کا موقف بھی آگیا

نواز شریف کے پلیٹ لیٹس کا معاملہ معمہ بن کر رہ گیا لیکن کیا زہر دیئے جانے کا ...
 نواز شریف کے پلیٹ لیٹس کا معاملہ معمہ بن کر رہ گیا لیکن کیا زہر دیئے جانے کا خدشہ ہے یا نہیں؟ برطانوی ڈاکٹر کا موقف بھی آگیا

  

لندن  (ویب ڈیسک)  سابق وزیراعظم نواز شریف کے پلیٹ لیٹس کا معاملہ ڈاکٹروں کیلئے معمہ بن گیا ہے۔ سرجن ڈیوڈ آر لارنس نے بھی زہر خوانی کا خدشہ ظاہر کر دیا ہے۔

دنیانیوز کے مطابق ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ نواز شریف کے پلیٹ لیٹس متوازن نہ ہوئے تو ٹاکسیلوجی سکرینگ کرانا پڑی گی،  ادھر ڈاکٹر کی رپورٹ پاکستان کی عدالت میں جمع کرا دی گئی ہے۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ نواز شریف کی صحت ٹھیک نہیں ہے، ان کے پلیٹ لیٹس کو مستحکم کرنے کے لیے علاج جاری ہے۔ نواز شریف کے محفوظ علاج کے لیے 50 ہزار سے ڈیڑھ لاکھ تک پلیٹ لیٹس ہونے چاہیں۔

لاہور ہائیکورٹ میں جمع کرائی گئی رپورٹ کے مطابق نواز شریف کو دل میں خون کی شریانوں کا بھی مسئلہ ہے۔ بائی پاس آپریشن کے بعد ان کی طبیعت کچھ بہتر ہے، مگر خون کی شریانوں میں مسائل ہیں۔رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ نواز شریف کے دل کی ایم آر آئی بھی ہو رہی ہے۔ انھیں دن میں دو مرتبہ واک بھی کرنی چاہیے۔ ان کے مرض کی مکمل تشخیص کا عمل بھی جاری ہے۔

ذرائع کے مطابق نواز شریف کے وکیل کی جانب سے ہائیکورٹ میں جمع کرائی گئی تازہ ترین رپورٹ برطانیہ میں پاکستانی ہائی کمیشن سے تصدیق شدہ ہے۔

مزید :

قومی -برطانیہ -