’ کسی بھی غیر ملکی کو نیا اقامہ ملے گا نہ ہی اس میں تجدید کی جائے گی جب تک وہ پہلے ۔۔۔‘ سعودی حکومت نے واضح اعلان کر دیا، ملک میں مقیم غیر ملکیوں یا جانے کا ارادہ رکھنے والوں کیلئے انتہائی ضروری معلومات

’ کسی بھی غیر ملکی کو نیا اقامہ ملے گا نہ ہی اس میں تجدید کی جائے گی جب تک وہ ...
’ کسی بھی غیر ملکی کو نیا اقامہ ملے گا نہ ہی اس میں تجدید کی جائے گی جب تک وہ پہلے ۔۔۔‘ سعودی حکومت نے واضح اعلان کر دیا، ملک میں مقیم غیر ملکیوں یا جانے کا ارادہ رکھنے والوں کیلئے انتہائی ضروری معلومات

  

ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی اعلٰی حکام نے گزشتہ روز وزارت محنت و سماجی ترقی کو باضابطہ ہدایات جاری کر دی ہیں کہ غیر ملکیوں کے ورک پرمٹ کے اجراءاور تجدید کیلئے آن لائن اجار رجسٹریشن لازمی ہو گی۔

نوکیا نے 3310دوبارہ متعارف کروانے کا اعلان کر دیا ،قیمت ساڑھے چھے ہزار ہو گی

سعودی گزٹ کی رپورٹ کے مطابق وزراءکونسل کی جانب سے یہ ہدایات کابینہ کے ہفتہ وار اجلاس میں جاری کی گئیں، جس کی صدارت خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان نے کی۔ وزیر کلچر و انفارمیشن عادل الطوریفی نے بتایا کہ کابینہ نے یہ فیصلہ بھی کیا ہے کہ الیکٹرانک اجار سسٹم کے ساتھ رجسٹریشن نہ ہونے کی صورت میں کسی بھی کرایہ داری معاہدے کو غیر موثر تصور کیا جائے گا۔

الیکٹرانک اجار سسٹم کا نفاذ 2014 ءمیں کیا گیا تھا۔ اسے وزارتِ ہاﺅسنگ نے کامرس اور داخلہ کی وزارتوں کے ساتھ مل کر تیار کیا تھا۔ وزارتِ ہاﺅسنگ کی جانب سے لازم قرار دیا گیا تھا کہ ریئل سٹیٹ کمپنیاں الیکٹرانک ایجار سسٹم میں شمولیت اختیار کریں تاکہ کرایہ داری مارکیٹ کو ریگولیٹ کیا جاسکے ، جس کا مقصد مالکان اور کرایہ داران کے حقوق کا تحفظ ہے، جبکہ اس کے زریعے کرایوں پر کنٹرول بھی مقصود ہے۔ اس سسٹم کے تحت مالکان اور کرایہ داران، دونوں کے لئے اجار نیٹ ورک کے ذریعے کرایہ داری معاہدے پر دستخط کرنا لازم ہے۔

مزید :

عرب دنیا -