پولیو کا قلع قمع کرنے کیلئے بھر پور کوششیں بروئے کار لائیں گے ،کمشنر ڈیرہ

پولیو کا قلع قمع کرنے کیلئے بھر پور کوششیں بروئے کار لائیں گے ،کمشنر ڈیرہ

پشاور( سٹاف رپورٹر)کمشنر ڈیرہ اسماعیل خان جاوید خان مروت نے کہا ہے کہ پولیو کے خطرناک وائرس کا مکمل طور پر قلع قمع کرنے کیلئے بھرپور کوششیں بروئے کار لا رہے ہیں تاکہ صحت مند معاشرے کی تشکیل کو یقینی بنایا جا سکے۔ انہوں نے ان خیالات کا اظہار پولیو کی بیخ کنی کیلئے قائم کردہ ڈویژنل ٹاسک فورس کے جائزہ اجلاس اوررواں ماہ کی 18تاریخ سے شروع ہونے والی سہ روزہ انسداد پولیو مہم کو کامیابی سے ہمکنار کرنے اور سیکورٹی انتظامات کو فول پروف بنانے سے متعلق منعقدہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔اجلاس میں ڈپٹی کمشنر ڈیرہ، ٹانک، ٹرائبل سب ڈویژن، ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈیرہ، ٹانک، ٹرائبل سب ڈویژن، ای پی آئی، ڈبلیو ایچ او، یونیسیف کے نمائندوں، این ایس ٹی او پی، محکمہ پولیس اور دیگر متعلقہ محکموں کے سربراہان نے شرکت کی۔ اس موقع پر اجلاس کو بتایا گیا کہ سابقہ انسداد پولیو مہموں میں پائے جانے والے نقائص اور خامیوں کو دور کرنے پر بھرپور توجہ دی جائیگی خصوصاً اس ماہ ضلع بنوں میں پولیو کیس رپورٹ ہونے کے تناظر میں پولیو مقاصد کے حصول پر خصوصی توجہ دی جائیگی۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ اس ماہ کی 18تاریخ سے شروع ہونے والی انسداد پولیو مہم کے دوران پورے ڈیرہ ڈویژن میں5لاکھ8ہزاربچوں کو انسداد پولیو کے قطرے پلوانے کا ہدف پورا کیا جائیگا۔ اس موقع پر کمشنر ڈیرہ جاوید خان مروت نے کہا کہ انسداد پولیو مہم کے دوران سیکیورٹی انتظامات کو فول پروف بنایا جا رہا ہے۔ آج کے اس اجلاس کا مقصد گزشتہ پولیو مہموں کے دوران پائے جانے والے نقائص اور خامیوں کا ازالہ کرنا ہے۔ پورے ڈیرہ ڈویژن بشمول ٹرائبل سب ڈویژن میں انسداد پولیو مہم کے دوران اہداف کے حصول کی کوشش کرنی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس ماہ کی 18تاریخ سے شروع ہونیوالی انسداد پولیو مہم کی تیاری کیلئے مکمل انتظامات بروئے کار لائے جا رہے ہیں تاکہ پانچ سال تک کی عمر کا کوئی بچہ انسداد پولیو کے قطرے پینے سے محروم نہ رہ جائے۔ اس سلسلے میں تمام محکموں کا باہمی تعاون انتہائی ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ ریفیوزل کیسز پر خصوصی توجہ دی جائے کیونکہ معاشرے کو پولیو کے وائرس سے پاک کرنا ہے۔ انہوں نے اجلاس کے شرکاء پر زور دیا کہ وہ کسی دباؤ کے بغیر اپنے فرائض سرانجام دیں۔ انہوں نے محکمہ پولیس کو ہدایت کی کہ پولیو مہموں پر تعینات عملے کی سیکورٹی کیلئے بھرپور اقدامات اٹھائے جائیں۔ پولیومہم کی کامیابی کی راہ میں حائل کوئی رکاوٹ برداشت نہیں کی جائیگی تمام عملہ انتہائی ذمہ داری کے ساتھ اپنے فرائض سرانجام دے۔ انہوں نے مزید کہا کہ پولیو کا خاتمہ ایک مقدس فریضہ ہے تاہم پولیو ویکسین کی افادیت سے متعلق لوگوں میں شعور بیدار کریں تاکہ وہ خوشی سے اپنے پانچ سال تک کی عمر کے بچوں کو ہر پولیو مہم کے دوران انسداد پولیو کے قطرے پلوا کر ذمہ دار شہری ہونے کا ثبوت دیں۔

مزید : پشاورصفحہ آخر