فوڈ اتھارٹی کے ہاتھوں استعمال شدہ آئل کے ری پروسسینگ گروہ بے نقاب

فوڈ اتھارٹی کے ہاتھوں استعمال شدہ آئل کے ری پروسسینگ گروہ بے نقاب

پشاور(سٹی رپورٹر)خیبر پختونخوافوڈ سیفٹی اینڈ حلال فوڈ اتھارٹی نے پشاورکے مختلف علاقوں میں کارروائی کرتے ہوئے استعمال شدہ آئل کے ری پروسیسنگ کا گروہ بے نقاب کیاجبکہ استعمال شدہ آئل کے ری پروسیسنگ کے تین یونٹس سیل کردی۔ترجمان کے پی فوڈ اتھارٹی نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ یہ کاروائیاں پشاور کے علاقے گنج، فقیر آباد اور چنگڑ آباد میں کی گئیں دراصل صابن بنانے کیلئے درآمد شدہ تیل کو ری پروسس کرکے مصالحہ بنانے والی فیکٹریوں کو سپلائی کیا جاتا تھا اور مصالحہ بنانے میں سرسوں کے تیل کی جگہ سستا مضرصحت استعمال شدہ آئل استعمال کیا جاتا تھا۔مصالحہ بنانے میں سرسوں کے تیل کی جگہ سستا مضرصحت استعمال شدہ آئل استعمال کیا جاتا تھاجو کہ انسانی صحت کیلئے انتہائی خطرناک ہوتا ہے۔سٹاک میں موجود تین سو سے زائد آئل ٹین قبضے میں لئے گئے۔ترجمان کا مزید کہنا تھا کہ مالکان کے خلاف قانونی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...