مطالبات پورے نہ ہوئے تو احتجاجی تحریک شروع کرینگے،مزمل صدیقی

مطالبات پورے نہ ہوئے تو احتجاجی تحریک شروع کرینگے،مزمل صدیقی

لاہور (پ ر)پنجاب بھر کے پیف پارٹنرز نے اپنے مطالبات کے حصول کیلئے پیف آفس کے باہر پیف انتظامیہ، وزیراعظم، وزیر اعلیٰ پنجاب، گورنر پنجاب اور دیگر اعلیٰ حکام کو باور کرایا ہے کہ اگر مطالبات ایک ہفتہ تک حل نہ کئے گئے تو پھر احتجاجی تحریک شروع کر دیں گے میڈیا کانفرنس سے پیف پارٹنرز اتحاد کے مرکزی قائدین خضر حیات گوندل، مزمل اقبال صدیقی، شیخ ارشد، صادق صدیقی، اجمل اشفاق، محمد ندیم، میاں اسحاق، حاجی منیر، رضوان یوسف ، میاں شبیر ہاشمی، حامد ناصر نے خطاب کیا۔

کہا کہ پیف سکولز میں نئے داخلوں پر پابندی فی الفور ختم کی جائے۔ ماہانہ ادائیگیوں میں تاخیر ختم کی جائے۔ گزشتہ چار سالوں سے ماہانہ فیس میں فی الفور اضافہ کیا جائے۔ پارٹرنز سکولوں کی معاشی بدحالی کا شکار کرنے کا موجب بننے والے ڈائریکٹر فنانس زبید الحسن کا کنٹریکٹ ختم کرکے اسے ملازمت سے فی الفور فارغ کیا جائے اسکی جگہ کوئی ذمہ دار اور دیانتدار افسر کو تعینات کیا جائے۔ پیف اپنی زبانی جمع خرچ کی پالیسیوں کو ختم کرے۔ تعلیم کی راہ میں رکاوٹ بننے والے تمام بیوروکریٹس کو فی الفور انکے عہدوں سے ہٹایا جائے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...