عدالت سے ضمانت ملنے کے بعد شہبازشریف کا پہلا بیان سامنے آگیا

عدالت سے ضمانت ملنے کے بعد شہبازشریف کا پہلا بیان سامنے آگیا
عدالت سے ضمانت ملنے کے بعد شہبازشریف کا پہلا بیان سامنے آگیا

  



لاہور (ویب ڈیسک)) لاہور ہائیکورٹ نے شہباز شریف کی ضمانت منظور کرتے ہوئے رہا کرنے کا حکم دے دیا،فیصلے کے  بعد اپنے بیان میںاپوزیشن لیڈر شہباز شریف کا کہنا ہے سچ کی ایک بار پھر جیت ہوئی، عدالتوں کے سامنے پیش ہوئے اور ہوتے رہیں گے، اگر ایک پائی کی کرپشن ثابت ہو جائے تو سیاست سے کنارہ کشی کر لوں گا، خدا کا شکر ہے کہ سچ سامنے آیا۔

یاد رہے شہباز شریف 64 دن تک جسمانی ریمانڈ پر نیب کی حراست میں رہے، اپوزیشن لیڈر کو 6 دسمبر 2018 کو احتساب عدالت نے جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیجوایا، سابق وزیراعلیٰ پنجاب 5 روز تک کوٹ لکھپت جیل میں رہے، 11 دسمبر کو شہبازشریف قومی اسمبلی کے اجلاس کے لیے اسلام آباد گے، اپوزیشن لیڈر گزشتہ 2 ماہ سے قومی اسمبلی کے اجلاس، پی اے سی کی مٹینگ اور علاج کے لیے اسلام آباد میں مقیم ہے۔

احتساب عدالت نے 2 ماہ کے دوران 6 بار طلب کیا مگر وہ پیش نہ ہوئے۔ احتساب عدالت نے شہبازشریف کو 18 فروری کو دوبارہ عدالت میں پیش ہونے کا حکم دے رکھا ہے۔

مزید : قومی