پنجاب حکومت نے نواز شریف کو جیل سے ہسپتال منتقل کرنے کی اجازت دے دی

پنجاب حکومت نے نواز شریف کو جیل سے ہسپتال منتقل کرنے کی اجازت دے دی
پنجاب حکومت نے نواز شریف کو جیل سے ہسپتال منتقل کرنے کی اجازت دے دی

  


لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن )پنجاب حکومت نے سابق وزیراعظم نواز شریف کو علاج کے لیے جیل سے جناح ہسپتال لاہور منتقل کرنے کی اجازت دیدی، پنجاب حکومت کی جانب سے جاری نوٹیفکیشن کے مطابق نوازشریف علاج معالجے تک جناح ہسپتال میں زیر علا ج رہیں گے ۔

نجی ٹی وی  کے مطابق پنجاب حکومت نے سروسز ہسپتال کے سپیشل میڈیکل بور ڈ کی سفارشات اور ذاتی معالج کی درخواست پر نیب کے ہائی پروفائل مجرم نواز شریف کو کوٹ لکھپت جیل سے جناح ہسپتال لاہور منتقل کرنے کا نوٹیفکیشن جاری کردیا ہے۔ ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ کیپٹن (ر ) فضیل اصغر کی جانب سے جاری کردہ نوٹیفکیشن کے مطابق نوازشریف علاج معالجے تک جناح ہسپتال میں زیر علا ج رہیں گے ۔ نوازشریف کے جناح ہسپتال میں پرائیویٹ کمرے کو سب جیل قرار دیا گیا ہے ۔ وزارت داخلہ پنجا ب نے نوازشریف کی جیل سے ہسپتال منتقلی اور علاج معالجے کے بعد ہسپتال سے دوبارہ جیل واپس لے جائے جانے کے موقع پر سیکیورٹی کے فول پروف انتظامات کرنے کے احکامات جاری کئے ہیں ۔ نوازشریف کے ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان نے نوازشریف کو علاج معالجے کی سہولیات فراہم کرنے کیلئے امراض قلب کے ہسپتال میں منتقل کرنے کیلئے ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ کیپٹن (ر ) فضیل اصغر کو خط ارسال کیا تھا ۔یادرہے کہ سابق وزیراعظم نوازشریف کا ایک مرتبہ پی آئی سی میں طبی معائنہ جبکہ انہیں سروسز ہسپتال میں بھی چھ روز تک زیر علاج رکھا گیا ۔

دوسری طرف  آئی جی جیل خانہ جات مرزا شاہد سلیم بیگ نے’’ جیو نیوز‘‘ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ نواز شریف کو صبح کسی بھی وقت ہسپتال منتقل کیا جا سکتا ہے لیکن حکومت فیصلہ کرے گی کہ نواز شریف کو صبح کس وقت ہسپتال منتقل کرنا ہے۔

مزید : قومی