ایف بی آر‘ ریونیو میں اضافے کیلئے جائیدادوں کی خریدو فروخت کی تفصیلات طلب

ایف بی آر‘ ریونیو میں اضافے کیلئے جائیدادوں کی خریدو فروخت کی تفصیلات طلب

  



ملتان (نیوز رپورٹر) فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) ان ایکشن ریونیو میں اضافے کے لئے جائیدادوں کی خرید و(بقیہ نمبر23صفحہ12پر)

فروخت کی تفصیلات طلب کرلی ہیں، خزانے میں ٹیکس پورا جمع نہ ہونے کے انکشافات۔ ذرائع کے مطابق فیڈرل بورڈ آف ریونیو نے ملتان سمیت ملک بھر کے ریجنل ٹیکس آفیسر اور لارج ٹیکس پیئر یونٹس سے گذشتہ 5 سال کے دوران جائیداد کی خرید و فروخت کرنے والے افراد، کمیٹیوں اور اداروں کے بارے میں تفصیلی رپورٹ مانگ لی ہے۔ تمام آر ٹی اوز اور ایل ٹی یوز کی اپنی اپنی حدود میں رہائشی و کمرشل مارکیٹوں، پلازوں، جائیدادوں کی خرید و فروخت کی گئی ہیں اور ٹیکس کی مد میں کتنا ریونیو حاصل ہوا ہے۔ ایف بی آر کو موصول ہونے والی خفیہ رپورٹ میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ رئیل اسٹیٹ سیکٹر سے مطلوبہ صلاحیت کے مطابق ٹیکس وصول نہیں ہوا ہے بہت سے آر ٹی اوز، ایل ٹی اوز کی حدود میں رئیل اسٹیٹ سیکٹر سے تعلق رکھنے والے ایجنٹس کی جانب سے جائیدادوں کی خرید و فروخت پر عائد ٹیکس کی کٹوتی تو کی گئی ہے مگر بروقت خزانے میں پورا ٹیکس جمع نہیں کرایا گیا جس کی وجہ سے ریونیو کا نقصان ہوا ہے۔ ان ایجنٹس کے خلاف کارروائی کی جائے گی اور ان سے سرچارج اور جرمانوں کے ساتھ اصل ریونیو حاصل کیا جائے گا۔

خریدو فروخت

مزید : ملتان صفحہ آخر