جج ارشد ملک کی مبینہ ویڈیو بنانے کے مقدمہ میں ملوث مرکزی ملزم میاں طارق کے خلاف بوگس چیک کے مقدمہ کی سماعت شہادتیں قلمبند کرنے کے لیے 18 فروری تک ملتوی

جج ارشد ملک کی مبینہ ویڈیو بنانے کے مقدمہ میں ملوث مرکزی ملزم میاں طارق کے ...

  



ملتان (کو رٹ رپورٹر) جوڈیشل مجسٹریٹ ملتان رانا محمد سہیل ریاض نے(بقیہ نمبر40صفحہ12پر)

احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کی مبینہ ویڈیو بنانے کے مقدمہ میں ملوث مرکزی ملزم میاں طارق کے خلاف بوگس چیک کے مقدمہ کی سماعت شہادتیں قلمبند کرنے کے لیے 18 فروری تک ملتوی کردی ہے گزشتہ سماعت پر پولیس کی جانب سے فائل پیش نہ کی گئی جس کی وجہ سے کوئی شہادت قلمبند نہ ہوسکی ہے۔قبل ازیں فاضل عدالت میں پولیس تھانہ چہلیک کے مطابق ملزم میاں طارق کے خلاف 24 مئی 2016 میں شہری وقار احمد نے 10 لاکھ روپے کا بوگس چیک دینے کا مقدمہ درج کرایا تھا، ملزم کے خلاف یہ بھی الزام ہے کہ ملزم نے مدعی کو اسکے بھائی اسرار کے خلاف بھڑکا کر دعویٰ دائر کرایا تھا،یاد رہے کہ ملزم میاں طارق کے خلاف احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کی مبینہ ویڈیو بنانے کا الزام بھی عائد ہے جبکہ ملزم اور اس کے بیٹے ارسلان کو ملتان کی مقامی عدالت نے عدالتی حکم کی تعمیل نہ کرنے پر قبل ازیں اشتہاری بھی قرار دیا تھا۔

مزید : ملتان صفحہ آخر