سفارتکاروں کا دورہ مقبوضہ کشمیر، بھارتی پارلیمنٹ کی تضحیک ہے،غلام احمد میر

سفارتکاروں کا دورہ مقبوضہ کشمیر، بھارتی پارلیمنٹ کی تضحیک ہے،غلام احمد میر

  



سرینگر(آئی این پی)مقبوضہ کشمیر کی تازہ صورتحال کا جائزہ لینے کے لئے سرینگر پہنچنے والے25غیر ملکی سفارتکاروں پر مشتمل وفد کے دورے پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے جموں و کشمیر پردیش کانگریس کمیٹی کے صدر غلام احمد میر نے کہا کہ یہ پارلیمنٹ اور اراکین پارلیمان کی تضحیک کرنے کی ایک کوشش ہے، غیر ملکی وفود کشمیر کے لئے کچھ بھی نہیں کرسکتے ہیں، اگر کچھ ہونا ہے تو وہ اپنے ملک کی پارلیمنٹ اور ارکان پارلیمان کرسکتے ہیں، یہاں بھارت کے پٹھو ممالک کے سفارتکار ہی دورہ کرتے ہیں،معتبر ممالک کے سفارتکار پابندیوں کے سائے میں آنے سے صاف انکاری ہیں، بھارت نے اس مسئلہ کو خود ہی انٹر نیشنلائز کیا ہے۔غلام احمد میر نے کہا کہ غیر ملکی وفود کو یہاں لایا جارہا ہے جبکہ ملک کے پارلیمانی نمائندوں کو اجازت نہیں دی جارہی۔یہ انڈین پارلیمنٹ کی تضحیک کرنے کی مودی کی ایک کوشش ہے۔اس وفد کا دورہ بھی نتیجہ خیز ثابت نہیں ہوگا اگر کوئی کوشش نتیجہ خیز ثابت ہوگی تو وہ ملک کے ارکان پارلیمان کا دورہ کشمیر ہوگا، یہاں جو کچھ بھی ہونا ہے ملک کی پارلیمنٹ سے ہونا ہے۔

غلام احمد میر

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر