ٹیکس نظام میں بہتری کے لئے  فوری اقدامات کا مطالبہ

   ٹیکس نظام میں بہتری کے لئے  فوری اقدامات کا مطالبہ

  

لاہور(این این آئی)پاکستان ٹیکس ایڈوائزایسوی ایشن نے کہا ہے کہ ٹیکس نظام میں بہتری کے لئے فی الفور اصلاحات کا عمل شروع کیا جائے،اگر ریاست ٹیکس اکٹھا کرے گی تو عوام کو زندگی کی بنیادی سہولتیں میسر آ سکیں گی،ایف بی ار کی مشینری بنکوں سے رقوم نکلوانے والے ٹیکس دہندگان میں خوف وہراس پھیلانے کی بجائے نئے لوگوں کو ٹیکس میں لانے کیلئے اقدامات کریں،حکومت اکنامک زونز کو بحال کرکے معیشت کو بہتر بنا سکتی ہے۔ ان خیالات کا اظہار ایسوسی ایشن کے چیئرمین جاوید اقبال قاضی،صدرر میاں عبدالغفار،جنرل سیکرٹری خواجہ ریاض حسین،ایگزیکٹو ممبر اجمل خان اوردیگر عہدیداران نے اپنے مشترکہ بیان میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت اور ٹیکس مشینری عرصہ دراز سے بڑے بڑے نادہندگان کے ڈیٹابیس کا اعلان کررہی ہے کہ ان کو لوگوں کو ٹیکس نیٹ میں لایا جائے گا۔ مگر انکم ٹیکس گوشواروں کی تاریخیں ختم ہوگئیں گوشواروں کی تعداد بڑھنے کی بجائے مزید کم ہوگی،جن لوگوں کے بارے میں اعلانات کئے جارہے تھے وہ لوگ ٹیکس نیٹ میں نہیں آسکے۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے غیر فعال ہونے والے اکنامک زونز کی بحالی کے دعوے کئے تھے لیکن وہ بھی پورے نہیں ہوئے۔حکومت کو چاہیے کہ نئے اکنامک زونز بنانے کے ساتھ ساتھ بند پڑے اکنامک زونز کو بھی بحال کرے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت سے مطالبہ ہے کہ موجودہ ٹیکس دہندگان کومزید مجبور کرنے کی بجائے نئے لوگوں کو نیٹ میں لایا جائے۔

مزید :

کامرس -