سپورٹس راؤنڈ اپ

سپورٹس راؤنڈ اپ

  

 دفاعی چیمپئن صوفیہ آسٹریلین اوپنسے باہر

آسٹریلین اوپن میں پہلا بڑا اپ سیٹ ہوگیا، دفاعی چیمپئن امریکا کی صوفیہ کینن، ایسٹونیا کی کایا کینیپی کے ہاتھوں شکست کھا کر ایونٹ سے باہر ہوگئیں۔میلبرن میں جاری ایونٹ کے دوسرے راونڈ میں ڈیفینڈنگ چیمپئن امریکا کی صوفیہ کنین کا سامنا ایسٹونیا کی کائیا کینیپی سے تھا،میچ میں امریکن پلئیر اپنے روایتی فارم سے بہت دور نظر آئیں اور اسٹونین پلئیر کے ہاتھوں چھ تین اور چھ دو سے شکست کھا کر ایونٹ سے باہر ہوگئیں۔

پانچویں بار نیشنل چیمپءِن بننا اعزاز، ماحور شہزاد

نیشنل بیڈ منٹن چیمپئن ماحور شہزاد کہتی ہیں کہ پانچویں بار نیشنل چیمپءِن بننا اْن کے لیے ایک بہت بڑا اعزاز ہے۔ کورونا وائرس کی صورتحال میں نیشنل چیمپئن شپ کی تیاری کرنا آسان نہیں تھا۔ماحور شہزاد نے کہا کہ کراچی میں بیڈ منٹن کورٹس بند تھے جبکہ لاہور میں چند روز ٹریننگ کی اْنہوں نے کہا کہ چارسدہ میں پہلی مرتبہ نیشنل چیمپئن شپ کا انعقاد ہوا، چارسدہ میں رہائش، کورٹس اور دیگر سہولیات شاندار تھیں۔ماحور شہزاد نے یہ بھی کہا کہ  چھوٹے شہروں میں ایونٹس ہونے سے کھیل ترقی کرے گا لیکن کورونا وائرس کی وجہ سے نیشنل اور انٹر نیشنل ٹورنامنٹس متاثر ہوئے ہیں۔اْن کا کہنا تھا کہ امید ہے کہ مارچ سے ایونٹس کے انعقاد میں بہتری آئے گی، کوشش ہو گی، مارچ سے انٹر نیشنل ٹورنامنٹس کھیل کر رینکنگ بہتر کروں۔ماحور شہزاد نے کہا کہ میری اس وقت رینکنگ 133 ہے جبکہ ٹاپ 100 میں آنا میرا ٹارگٹ ہے۔

40 ویں گالف چیمپئن شپ شبیر اقبال  کے نام

چالیسویں چیف آف دی ایئر اسٹاف گالف چیمپئن شپ گالفر شبیر اقبال نے جیت لی۔کراچی میں ہونے والی چیمپئن شپ میں شبیر اقبال نے11 انڈر پار کے ساتھ کھیل کا اختتام کیا۔مطلوب احمد 4 انڈر پار کے ساتھ دوسرے نمبر پر اور محمد منیر تیسرے نمبر پر رہے۔چیمپئن شپ میں ملک بھر سے چار سو پروفیشنل گالفرز حصہ لیا تھا۔

پاکستان  ورلڈ یوتھ اسکریبل کپ فائنل  میں ہار گیا

تھائی لینڈ نے ورلڈ یوتھ اسکریبل کپ جیت لیا، پاکستان ٹیم ایونٹ میں رنرز اپ رہی۔کورونا وباء کی وجہ سے پاکستان کی میزبانی میں کھیلے گئے آن لائن اسکریبل ایونٹ کا فائنل ٹاکرا پاکستان اور تھائی لینڈ کے درمیان ہوا جس میں ٹیم پاکستان نے شاندار مقابلہ کیا، لیکن تھائی لینڈ کی ٹیم اس سے بہتر ثابت ہوئی۔تھائی لینڈ کی ٹیم نے پندرہ کے مقابلے میں اکیس گیمز سے فتح سمیٹتے ہوئے ٹائٹل اپنے نام کرلیا۔پاکستان کی جانب سے حشام ہادی خان نے 6 میں سے 4 میچز جیتے۔تھائی لینڈ کے نپت مجموعی طور پر 36 میں سے 33 گیمز جیت کر ٹورنامنٹ کے بہترین کھلاڑی قرار پائے۔پاکستان کے سب سے کامیاب کھلاڑی سید عماد علی رہے جنھوں نے 29 میچز میں فتوحات حاصل کیں۔آخر میں کھلاڑیوں میں انعامات تقسیم کیے گئے۔

کورونا مذاق نہیں،  ثانیہ مرزا

بھارتی ٹینس اسٹار اور پاکستانی کرکٹر شعیب ملک کی اہلیہ ثانیہ مرزا نے انکشاف کیا ہے کہ رواں ماہ کے آغاز میں وہ بھی کورونا کا شکار ہوگئی تھیں۔ثانیہ مرزا نے اپنی سوشل میڈیا پوسٹس میں 2 سالہ بیٹے کے ساتھ تصویر شیئر کرتے ہوئے مداحوں کو بتایا کہ انہیں بھی 2021 کے آغاز میں ہی کورونا ہوگیا تھا۔ثانیہ مرزا نے اپنی پوسٹ میں شکرانے ادا کرتے ہوئے واضح کیا کہ اب وہ صحت مند ہیں تاہم وہ کورونا کی اذیت سے گزر چکی ہیں۔بھارتی ٹینس اسٹار نے مداحوں کو خبردار کیا کہ وہ کورونا کو مذاق نہ سمجھیں، کیوں کہ انہیں تمام احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کے باوجود بھی کورونا ہوگیا تھا۔

کلب کرکٹ کی بحالی وقت کی اہم ضرورت

پاکستان کرکٹ میں لاہور اور کراچی کو ایک اہم مقام حاصل ہے خاص طور پر ان دونوں شہروں کی کلب کرکٹ انتہائی اہمیت کی حامل ہے اگر پاکستان کرکٹ کی تاریخ پر نظر دوڑائیں تو پاکستان کرکٹ کی تاریخ کے اب تک اسی فی صد کے لگ بھگ کرکٹرز کا تعلق کسی نہ کسی طرح ان دونوں شہروں سے ہی ہے،لاہور جسے کلب کرکٹ کا شہر کہا جاتا ہے میں گذشتہ 20سال کا سب سے بڑ ا ٹورنامنٹ اوٹی سی لاہور چیلنج کپ گولڈن سٹار کلب کی کامیابی پر اختتام پذیر ہوگیا،،گولڈن سٹار کلب نے تاریخٰی فائنل میں پانچ وکٹوں سے کامیابی حاصل کرکے لاہور کی کرکٹ پر اپنی برتری ثابت کردی۔شاہ فیصل گراؤنڈ پرگولڈن سٹار کلب کی دعوت پر کرکٹ سینٹر کلب نے پہلے کھیلتے ہوئے چھ وکٹوں کے نقصان پر 238رنزبنائے،حسیب الرحمن 65،محمد وحید 47،علی ظفر 29اوربلاول اقبال 21رنزبناکر نمایاں رہے،گولڈن سٹار کلب کے کپتان صداقت علی اور محمد حسیب نے دودو جبکہ احمد صفی عبد اللہ اور احمد اشرف نے ایک ایک کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔جواب میں رئیس بٹ 74،محمد سلیم 50،احمد صفی عبد اللہ 29، میر سعید 21،عبدالصمد 17اور عزم الحق 16رنزبناکر نمایاں رہے،کرکٹ سینٹر کلب کے مامون ریاض نے تین اور قیصر اشرف نے دو کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔میچ میں  عمدہ  بلے بازی پر گولڈن سٹار کلب کے رئیس بٹ مین آف دی میچ،کرکٹ سینٹر کے طارق نواز ٹورنامنٹ کے بہترین بلے باز،محمد وحید بہترین آل راؤنڈر،گولڈن سٹار کے عزم الحق بہترین وکٹ کیپر،حافظ عثمان ندیم بہترین ایمرجنگ پلئیر،گولڈن سٹار کے کپتان صداقت علی ٹورنامنٹ کے  بہترین اسپنرجبکہ گولڈن سٹار کلب کے اسدرضاٹورنامنٹ کے بہترین باولر اور پلئیر آف دی ٹورنامنٹ قرار پائے۔سابق چیئرمین پی سی بی خالد محمود،سابق صدر لاہور ریجن  خواجہ ندیم احمد،سابق چیف سلیکٹر لاہور ریجن عامر الیاس بٹ،سابق صدر ویسٹ زون کرکٹ ایسوسی ایشن سردار نوشاد،سابق ٹیسٹ کرکٹر شاہد نذیر،محمد خلیل ملک سجاد اکبر،رکن پنجاب اسمبلی نیلم حیات،سعدیہ سہیل رانا،ڈاکٹر فرحی امین نے انعامات تقسیم کئے۔اوٹی سی لاہور چیلنج کپ کے حوالے سے چیئرمین ٹورنامنٹ کمیٹی ملک سجاد اکبر  کا کہنا تھا کہ ہماری کوشش ہے کہ شہر میں کرکٹ کا معیار بہتربنانے پر توجہ دیں تاکہ نوجوان کھلاڑیوں کوآگے بڑھنے کے  لئے ایک پلیٹ فارم ہو۔انہوں نے کہا کہ لاہور چیلنج کپ میں شریک ٹیموں کو آٹھ گروپس میں تقسیم کیاگیا ہر گروپ کی فاتح ٹیم  نے لیگ مرحلے میں کوالیفائی کیا۔ایونٹ کو  احسن انداز میں کروانے کے لئے  پروفیشنل اور کرکٹ کی سمجھ بوجھ رکھنے والے  لوگوں پر مشتمل تین مختلف کمیٹیاں تشکیل دی گئیں،،انہوں نے بتایا کہ کرکٹ میں بال انتہائی اہمیت کا حامل ہوتا ہے اور ہم نے اسی اہمیت کو مدنظر رکھتے ہوئے پہلی مرتبہ کلب کرکٹ کی سطح پرگریس کے معیار کا بال استعمال کیا گیا۔

مزید :

ایڈیشن 1 -