اندرون سندھ 2افراد اغواء، اغواءکاروں نے تاوان میں بوسکی کے 10سوٹ مانگ لیے 

اندرون سندھ 2افراد اغواء، اغواءکاروں نے تاوان میں بوسکی کے 10سوٹ مانگ لیے 
اندرون سندھ 2افراد اغواء، اغواءکاروں نے تاوان میں بوسکی کے 10سوٹ مانگ لیے 

  

شکار پور (ڈیلی پاکستان آن لائن) جرم کی وارداتوں کے بعد تاوان کی مد میں عمومی طور لاکھوں ، کروڑوں روپے کا مطالبہ کیا جاتاہے لیکن پہلی مرتبہ اغواءکاروں نے بھاری رقم کے علاوہ بوسکی کے 10سوٹ بھی مانگ لیے تاہم پولیس نے کامیاب کارروائی کی اور اغواءہونیوالے ماموں بھانجے کو بحفاظت بازیاب کرالیاگیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق سلک کی سب سے اچھی قسم بوسکی ہوتی ہے اور اسے گرمیوں کیلئے بہترین تصورکیاجاتاہے، یہ جنوبی ایشیاءبالخصوص پاکستان میں مردوں کا پسندیدہ لباس شمار ہوتاہے ۔ سندھ کے ضلع شکار پور کی پولیس نے دو افراد کو گرفتار کرلیا جنہوں نے دو افراد جو رشتے میں ماموں بھانجے تھے، انہیں اغوا ءکیا تھا۔ ملزموں نے تاوان کی مد میں 40لاکھ روپے اور بوسکی کے 10کھلے سوٹ مانگے تھے۔ 

چھاپہ مار کارروائی کے دوران پولیس نے دو ملزم آصف اور عاشق کو تحویل میں لے لیا ۔ بتایاگیا ہے کہ اغواءہونیوالے دونوں افراد اختر چانڈیو اور فیصل چانڈیو ڈھکن تھانے کی حدو د میں موجود گاﺅں ایوب چانڈیو کے رہائشی ہیں۔ 

مزید :

جرم و انصاف -