'اسلام آباد جانے سے روکا  تو رخ پنڈی کی جانب ہو گا' مولانا فضل الرحمان کا اعلان

'اسلام آباد جانے سے روکا  تو رخ پنڈی کی جانب ہو گا' مولانا فضل الرحمان کا اعلان
'اسلام آباد جانے سے روکا  تو رخ پنڈی کی جانب ہو گا' مولانا فضل الرحمان کا اعلان
سورس:   ٖFile

  

تونسہ شریف(ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم )کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے اعلان کیا ہے کہ ہم نے لانگ مارچ کے لیے اسلام آباد کا فیصلہ کیا تھا جبکہ راولپنڈی کا نام دوسرے آپشن کے طور پر لیا تھا۔ اگر ہمیں اسلام آباد جانے سے روکا گیا تو ہمارا رخ راولپنڈی کی جانب ہو گا۔ 

مولانا فضل الرحمان نے تونسہ شریف میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے ہمیشہ آئین کے مطابق تمام اداروں کے کام کرنے کامطالبہ کیا ۔لانگ مارچ کے لیے ہم رکاوٹیں توڑ کربھی اسلام آبادپہنچیں گے اگر روکا گیا تو پھر رخ راولپنڈی کی طرف ہو گا۔ ان کا کہنا تھا کہ اگر لانگ مارچ کے باوجود حکومت نہیں جاتی تو پھر بھی پوری قوت سے تحریک کوجاری رکھیں گے ۔ہماری آمدپربغیراطلاع دیے ہزاروں کارکن اکھٹے ہوسکتے ہیں ۔ تحریکوں میں جذبے لڑتے ہیں وسائل نہیں۔ ہم حکومت کے تمام ہتھکنڈے ناکام بنادیں گے۔

انہوں نے کہا کہ پی ڈی ایم کامستقبل شاندارنظرآرہاہے ، پی ڈی ایم کااتحاد انتخابات کےلیےنہیں لیکن یہ خاارج ازامکان بھی نہیں۔ پی ٹی آئی کی حکومت ہونے کے با وجود بھی ان کے اپنے اراکین ان کے ساتھ نہیں ہیں ۔ان کا مزید کہنا تھا کہ عثمان بزدارسےہماراکوئی اختلاف نہیں لیکن الیکشن میں دھاندلی ہوئی ہے ۔ پنجاب کے ملازمین جب بھی آوازٹھائیں گے ہم ساتھ دیں گے۔

مزید :

قومی -