مصری خاتون 43سال تک آدمی کا روپ دھار کر جیتی رہی کیونکہ ۔۔۔

مصری خاتون 43سال تک آدمی کا روپ دھار کر جیتی رہی کیونکہ ۔۔۔
مصری خاتون 43سال تک آدمی کا روپ دھار کر جیتی رہی کیونکہ ۔۔۔

  

قاہرہ(نیوزڈیسک)آپ نے کچھ فلموں میں دیکھا ہو گا کہ ایک خاتون اپنے آپ کو مرد کا روپ دھار کر معاشرے کے ظلم سے محفوظ رہنے کی کوشش کرتی ہے لیکن حا ل ہی میں ایک عرب خاتون کے بارے میں انکشاف ہوا ہے کہ اپنی بیٹی کو پالنے کے لئے اس نے 43سال تک مرد کا روپ دھاری رکھا۔70سالہ مصری خاتون سیسا ابوداہوگذشتہ دنوں ایک ٹی وہ پروگرام میں بھی نمودار ہوئی اور اپنی زندگی کی کہانی سنائی۔

وہ انوکھا ترین قبیلہ جو موت پر جشن اور پیدائش پر سوگ مناتا ہے

اس کا کہنا ہے کہ اس نے یہ روپ اس لئے دھارا کہ اس کا شوہر جوانی میں انتقال کر گیا تھا اور اس نے اپنی بیٹی کی بہتر پرورش کے لئے مرد بننے فیصلہ کیا۔اس نے بتایا کہ اس دوران وہ مردوں والی متعدد نوکریوں میں رہی لیکن کبھی بھی کسی کو شک نہیں ہوا کہ وہ ایک عورت ہے۔اس کا کہنا ہے کہ وہ مردوں والے کپڑے پہننے کی اس حد تک عادی ہو چکی ہے کہ اب عورتوں والے کپڑے اسے عجیب لگتے ہیں اور سب لوگ اسے مرد سمجھتے ہیں اور اگر کوئی اس کا شناختی کارڈ یا پاسپورٹ دیکھے تو تب اسے یقین نہیں آتا کہ وہ ایک عورت ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس