آل پاکستان تا جر اتحا د کے زیر اہتمام ملک گیر تاجر کنو نشن آج اسلام آباد میں ہو گا

آل پاکستان تا جر اتحا د کے زیر اہتمام ملک گیر تاجر کنو نشن آج اسلام آباد میں ...

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)آل پاکستان تا جر اتحا د کے زیر اہتمام ملک گیر تاجر کنو نشن آج اسلام آباد میں ہو گا جس میں ملک بھر سے تا جر تنظیموں کے منتخب نمائندے شر کت کر یں گے ،کنو نشن میں ودہو لڈ نگ ٹیکس اور ایمنسٹی اسکیم پر تا جروں کے مو قف اور آئندہ کے لا ئحہ عمل کا اعلان کیا جا ئے گا ۔انھوں نے کہاہم نے وود ہولڈنگ ٹیکس کے خاتمے،ٹیکس نظام میں اصلاحات، ٹیکس ریفارمرز، ایف بی آرکے بوسیدہ ڈھانچے کو ازسرنو منظم کرنے، پہلے سے موجود ٹیکس گزاروں پر بوجھ کم کرنے اور ٹیکس گزاروں میں اضافے کی بات کی تھی۔ان خیالات کا اظہار انھوں نے اسلام آباد میں میڈیا کے نمائندوں کو بر یفنگ دیتے ہو ئے کیا ۔اس مو قع پر ان کے میڈیا کو آرڈینیٹر ضیا ء احمد بھی مو جو د تھے ۔محمد کاشف چو ہدری نے کہا کھاتہ داروں کو بینکوں میں پڑی اپنی ہی رقم پر بینک ٹرانزیکشن پر 0.6%ٹیکس کٹوتی قابل قبول نہیں جبکہ ایمنسٹی اسکیم ایف بی آرکی ناکامی کامنہ بولتا ثبوت ہے،حکومت نے چھوٹے تاجروں کے نام پر مافیاز، اسمگلرز، کرپشن کے کالے دھن کو سفید کرنے کے لیے اسکیم کی منظوری دے دی۔ انہوں نے کہا کہ اس اسکیم سے کسی چھوٹے تاجر کو کوئی فائدہ نہیں نہ ہی حکومت کی آمدن بڑھے گی۔ نہ ٹیکس نیٹ کو توسیع ملے گی اور نہ ہی بجٹ خسارہ کم ہوگا۔ انھوں نے کہا کالا دھن سفید کرنے کا قانون درحقیقت انہی طبقات کے لیے لایا گیاہے جو اپنی دولت چھپانے اور ٹیکس چوری کرنے کے عادی مجرم ہیں ٹیکس ایمنسٹی اسکیم تاجر برادری کا مطالبہ ہی نہیں تھا اس کے زریعے ملک لو ٹنے والوں کو فائدہ ہو گا ۔ اس سے صرف ٹیکس چوروں اور ملی بھگت کرنے والی بیوروکریس کی حوصلہ افزائی ہوگی۔ حکومت ٹیکس چوروں کی مدد دینے کی اس اسکیم کو تاجروں کے نام سے منسوب نہ کرے۔ کاشف چو ہدری نے کہایہ اسکیم سالوں سے ٹیکس ادا کرنے والوں کی حوصلہ شکنی ہے ۔ ٹیکس کے منصفانہ نظام کے بغیر قوم کا مستقبل روشن کرنے سے متعلق حکومتی دعوے کھوکھلے ثابت ہوں گے۔

مزید : ملتان صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...