ہائی کورٹ :اورنج لائن ٹرین منصوبہ کا روٹ ختم کرنے کی درخواست پر جواب طلب

ہائی کورٹ :اورنج لائن ٹرین منصوبہ کا روٹ ختم کرنے کی درخواست پر جواب طلب
ہائی کورٹ :اورنج لائن ٹرین منصوبہ کا روٹ ختم کرنے کی درخواست پر جواب طلب

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے اورنج لائن ٹرین منصوبے کے نام پر سڑکوں کی توڑ پھوڑ،متبادل روٹس کی عدم فراہمی اور تاریخی عمارتوں کو نقصان پہنچانے کے خلاف دائر درخواست پر حکومت پنجاب کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا۔جسٹس عابد عزیز شیخ کی سربراہی میں قائم دو رکنی بنچ نے یہ نوٹس جوڈیشل ایکٹوازم پینل کی درخواست پر جاری کیا ۔درخواست گزار کے وکیل اظہر صدیق نے موقف اختیار کہ اورنج لائن ٹرین منصوبہ واضح منصوبہ بندی کے بغیر شروع کیا گیا۔منصوبہ شروع کرنے سے قبل بجلی،پانی ،سوئی گیس اور متبادل روٹس کی فراہمی کے متبادل انتظامات نہیں کئے گئے۔متبادل سڑکیں نہ ہونے اور موجودہ سڑکوں کی توڑ پھوڑ سے شہر بھر میں ٹریفک ایک عفریت کا روپ دھار چکی ہے جس سے شہری کئی کئی گھنٹے ٹریفک میں پھنسنے پر مجبور ہیں۔ایمبولینسوں کو راستہ نہ ملنے کے باعث مریضوں کی مشکلات میں بھی اضافہ ہوا ہے۔منصوبے کی آڑ میں شالا مار باغ،چوبرجی،مقبرہ دائی انگہ ،کپور تھلہ ہاوس کے علاوہ کئی تاریخی عمارتوں،مساجد اور قبرستانوں کو مسمار کیا جا رہا ہے لہذا عدالت اس منصوبے پر جاری کام روکنے،مشینری ہٹانے،متبادل سڑکوں،،پانی کی پائپ لائنوں کی فراہمی اور متبادل بجلی کے کھبوں کی تنصیب کے احکامات صادر کرئے۔ جس پر عدالت نے حکومت پنجاب کو18جنوری کے لئے نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیاہے۔

مزید : لاہور