ہائی کورٹ نے ضلعی حکومتوں کی آڈٹ رپورٹس پی اے سی میں پیش کرنے کا حکم دے دیا

ہائی کورٹ نے ضلعی حکومتوں کی آڈٹ رپورٹس پی اے سی میں پیش کرنے کا حکم دے دیا
ہائی کورٹ نے ضلعی حکومتوں کی آڈٹ رپورٹس پی اے سی میں پیش کرنے کا حکم دے دیا

لاہور(نامہ نگار خصوصی ) لاہور ہائیکورٹ نے گورنر پنجاب اور وزیر اعلی پنجاب کو ضلعی حکومتوں کی آڈٹ رپورٹس پنجاب اسمبلی کی پبلک اکاﺅنٹس کمیٹی میں پیش کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے رپورٹ طلب کر لی ہے۔جسٹس شاہد وحید نے کیس کی سماعت کی۔پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر میاں محمودالرشید کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ حکومت نے پنجاب اسمبلی کی پبلک اکاونٹس کمیٹیوں کو بلا جواز غیر فعال کر رکھا ہے۔انہوں نے کہا کہ پبلک اکاونٹس کمیٹیوں کے روبرو ضلعی حکومتوں کی آڈٹ رپورٹس پیش نہیں کی گئیں۔انہوں نے بتایا کہ ضلعی حکومتوں کے بجٹ میں 200 ارب روپے کی خورد برد کا خدشہ ہے لہذا عدالت آڈٹ رپورٹس پبلک اکاونٹس کمیٹیوں کے روبرو پیش کرنے کے احکامات صادر کرے۔آڈیٹر جنرل کی جانب سے جواب داخل کراتے ہوئے موقف اختیار کیا گیا کہ ضلعی حکومتوں کا آڈٹ کر کے رپورٹ گورنر پنجاب کو بھجوا دی گئی ہے جس پر عدالت نے گورنر پنجاب اور وزیر اعلی پنجاب کو ضلعی حکومتوں کی آڈٹ رپورٹس ایک ہفتے میں متعلقہ پبلک اکاﺅنٹس کمیٹی میں پیش کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے رپورٹ طلب کر لی۔

مزید : لاہور

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...