کوہاٹ میں کام کرنیوالی کمپنیاں مقامی افراد کو روزگار فراہم کریں : حمایت اللہ

کوہاٹ میں کام کرنیوالی کمپنیاں مقامی افراد کو روزگار فراہم کریں : حمایت اللہ

پشاور (سٹاف رپورٹر)خیبر پختونخوا مشیر وزیر اعلیٰ برائے توانائی و برقیات حمایت اﷲ خان نے کوہاٹ ڈویژن کے ممبران قومی اور صوبائی اسمبلی سے ملاقات کرتے ہوئے کہا ہے کہ کوہاٹ ڈویژن کے لئے ڈاکٹرز ،ماہرین ماحولیات اور دیگر سائنسدانوں پر مشتمل ایک جائنٹ انوسٹی گیشن ٹیم تشکیل دیا جائے گا جو تیل اور گیس کی ماحولیاتی آلودگی اور ان کی وجہ سے علاقے میں بڑھتے ہوئے امراض کا جائزہ رپورٹ صوبائی حکومت کو پیش کرے گی ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے کوہاٹ ڈویژن میں کام کرنے والے آئل اینڈ گیس کمپنیوں کا دورہ کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر ممبر قومی اسمبلی شاہد خان خٹک ، ممبران صوبائی اسمبلی میاں نثار گل کاکاخیل ، ظہور شاکر ، شاہ فیصل ، سیکرٹری توانائی و برقیات محمد سلیم خان ، ایڈیشنل سیکرٹری توانائی و برقیات محمد آصف ، ڈپٹی کمشنرز کرک، کوہاٹ ، ہنگو ، چیف انجینئر اویس شکیل ، سینئر جیالوجیسٹ کاشف اسحاق ، جیالوجسٹ کاشف تنویر ، ڈپٹی جنرل منیجر اسلم خٹک ، او جی ڈی سی ایل ، مول آئل اینڈ گیس کمپنی اور ایس این جی پی ایل حکام نے شرکت کی ۔ مشیر توانائی نے کمپنیوں کو ہدایت دیتے ہوئے کہا ہے کہ ماحول کو صاف ستھرا رکھنے کے لئے موثر اور ٹھوس اقدامات اٹھائے جائیں تاکہ ماحولیاتی آلودگی سے بچایا جا سکے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ کارپوریٹ سماجی ذمہ داری کی خاطر پودے لگائے جائیں تاکہ ماحول کو گندگی سے بچایا جا سکے او رکرک ممبران اسمبلی کی شکایات بھی دور ہوں ۔ حمایت اﷲ خان نے ڈھوک حسین ، نوشپہ اور مکوڑی آئل اینڈ گیس فیلڈ کا بھی دورہ کیا ۔ اس موقع پر ممبران قومی و صوبائی اسمبلی نے سخت تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مذکورہ تیل اور گیس کمپنیوں کی وجہ سے ہمارا انفراسٹرکچر کا برا حال ہے ، ہماری سڑکیں کمپنیوں کی بڑی گاڑیوں کی وجہ سے خراب ہو چکی ہیں ۔ مشیر توانائی نے کہا کہ تیل اور گیس کمپنیوں کا تھرڈ پارٹی آڈٹ کرایا جائے تاکہ صاف و شفاف کام ممکن ہو سکے ۔ سیکرٹری توانائی نے کہا کہ لیز معاہدے کے تحت زمینوں کو جو قیمت مل رہی ہے وہ بہت پرانا اور کم ہے اس قانون کو حکومت ریوائز کرے گی ۔ ممبران اسمبلی نے کہا کہ تیل او ر گیس کی رائلٹی بہت کم ہے اس لئے اس میں اضافہ کیا جائے تاکہ مقامی باشندوں کی حالت زندگی بہتر ہو سکے ۔ حمایت اﷲ خان نے ہدایت دیتے ہوئے کہا کہ کوہاٹ ڈویژن میں کام کرنے والی کمپنیاں طریقہ کار تبدیل کرے اور مقامی لوگوں کو روزگار فراہم کرے ۔ انہو ں نے مزید کہا کہ مقامی طالب علموں کے لئے وظائف کا اجراء کیا جائے ، صحت سپورٹس اور تفریحی سرگرمیوں کا بھی مقامی لوگوں کے لئے بندوبست کیا جائے اوجی ڈی سی ایل کمپنی کے اہلکاروں نے مشیر توانائی کو بتایا کہ نوشپہ آئل اینڈ گیس فیلڈ سے 18400بیرل تیل mmcfd 96گیس 300میٹرک ٹن LGPروزانہ کی بنیاد پر حاصل کیا جاتا ہے مشیر توانائی نے او جی ڈی سی ایل کنٹرول روم کا بھی دورہ کیا اور کہا کہ پروٹکشن مانیٹر کرنے کے لئے کمپیوٹرائزڈ میٹر لگائے جائیں تاکہ پوٹکشن کا صحیح پتہ چل سکے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر