جندول، پی ٹی آئی کارکنوں کا ناروابجلی لوڈ شیڈنگ کیخلاف احتجاجی مظاہرہ  

جندول، پی ٹی آئی کارکنوں کا ناروابجلی لوڈ شیڈنگ کیخلاف احتجاجی مظاہرہ  

  



جندول (نمائندہ پاکستان)جندول منڈہ میں تحریک انصاف کے سینکڑوں کارکنوں کا بجلی کے طویل لوڈشیڈنگ کے خلاف شدید احتجاج اور مظاہرہ،دیر باجوڑ شاہراہ کئی گھنٹوں تک بلاک، گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ گئے مظاہرین کیساتھ رکن قومی اسمبلی محمد بشیر خان بھی شامل ہوگئے،ایکسین واپڈا کو جندول اور میدان کے لائن سپرنڈنٹ کے قبلہ درست کرنے کی تین دن تک الٹی میٹم دیدی،تین دن میں دونوں سپرنڈنٹ تبدیل نہ کئے گئے تو ایکسین کو صوبہ بدر کیا جائیگا،ایم این اے محمد بشیر خان کے وارننگ گزشتہ روز شدید بارش میں پاکستان تحریک انصاف کے سینکڑوں کارکنوں اور علاقے کے عوام نے جندول منڈہ میں دیر باجوڑ شاہراہ پر غیر اعلانیہ اور طویل لوڈ شیڈ نگ اور اوور بلینگ پر واپڈ کے خلاف زبردست مظاہر ہ کیا،مظاہرین نے واپڈ کے خلاف شدید نعرہ بازی کی اور دیر باجوڑ شاہراہ کو ہرقسم ٹریفک کیلئے بند کردیا اس موقع پر پارلیمانی سیکرٹری و ممبر قومی اسمبلی محمد بشیر خان نے محکمہ واپڈ پر کرپشن کے شدید الزامات عائد کرتے ہوئے کہا کہ واپڈاء کے اہلکار میٹر سے لیکر ٹرانسفرمر کے تنصیب اور معمولی کاموں پر عوام سے رشوت لیتے ہیں انہوں نے کہا کہ علاقہ میں ایکسپریس لائن کی تعمیر میں غیر ضروری اور غیر معمولی تاخیر سے کام لیا جارہاہے۔ انہوں نے کہا کہ مسئلہ حل کرانے کیلئے وزیر اعظم اور وفاقی وزیر بجلی عمر ایوب سے ڈائریکٹیوز آئے مگر ان پر کوئی کام نہ ہوا۔ انہوں نے کہا کہ واپڈاء والے مخصوص منصوبہ بندی کے تحت منتخب ممبران کو ناکام بنانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مسئلہ حل کرانے کیلئے وفاقی وزیر بجلی نے اسمبلی کے فلور پر دسمبر تک کا وقت دیا تھا مگر واپڈا والے اب بھی کام نہیں کررہے۔انہوں نے واضح کیا کہ اگر جلد از جلد ایکسپریس لائن اور گریڈ سٹیشن پر کام شروع نہ ہوا تو نتائج کے ذمہ دار محکمہ واپڈا ہونگے اس موقع پر رکن قومی اسمبلی محمد بشیر خان نے ایکسین واپڈ کو منڈہ طلب کرکے شدید احتجاج کیا اور انہیں وارننگ دی کہ تین دن کے اندر اندر جندول اور میدان کے دونوں لائن سپرنڈنٹ تبدیل نہ کئے گئے تو ایکسین کو صوبہ بدر کیا جائیگا،مظاہرے سے حنیف خان، عمران جان، خان باچا، حاجی عنایت خان و دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ علاقے میں بجلی کی طویل اور غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ نے صارفین کی مشکلات میں اضافہ کیا ہے انھوں نے واپڈا کے ایکسئن اور دیگر عملہ کو خبردار کیا کہ اگروہ عوام کے مشکلات میں کمی نہیں کر سکتے تو جندول کے عوام بجلی کی بل ادا نہیں کریں گے اور احتجاج کا سلسلہ جاری رکھیں گے جس کی تمام تر ذمہ داری واپڈا حکام پر عائد ہوگی۔اس موقع پر پولیس کی بھاری نفری اور اسسٹنٹ کمشنر جندول محمد یونس خان اور ڈی ایس پی اعجاز خان بھی موجود تھے

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...