پسند کی شادی کے حوالے سے پاکستانی والدین کی رائے میں واضح تبدیلی، کتنے فیصد والدین لو میرج کے حق میں ہیں؟ حیران کن سروے

پسند کی شادی کے حوالے سے پاکستانی والدین کی رائے میں واضح تبدیلی، کتنے فیصد ...
پسند کی شادی کے حوالے سے پاکستانی والدین کی رائے میں واضح تبدیلی، کتنے فیصد والدین لو میرج کے حق میں ہیں؟ حیران کن سروے

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) گیلپ پاکستان کی جانب سے کیے گئے ایک سروے میں یہ انکشاف سامنے آیا ہے کہ بچوں کی پسند کی شادی کے حوالے سے پاکستانی والدین کی سوچ میں گزشتہ 12 برس میں واضح تبدیلی آئی ہے۔

گیلپ پاکستان کی جانب سے یہ سوال پوچھا گیا ’ کیا والدین کو اپنے بچوں کو پسند کی شادی کرنے کی اجازت دینی چاہیے؟ گیلپ نے اس سوال کے جواب کے بارے میں 2005 اور 2017 میں کیے جانے والے سروے کے اعدادو شمار جاری کیے ہیں۔

سروے کے مطابق 2005 کے سروے میں مذکورہ بالا سوال کے جواب میں 41 فیصد والدین اس بات سے متفق نظر آئے کہ بچوں کو پسند کی شادی کی اجازت دی جانی چاہیے، 28 فیصد والدین ایسے تھے جنہوں نے کہا کہ حالات کو دیکھ کر لو یا ارینج میرج کا فیصلہ ہونا چاہیے جبکہ 31 فیصد والدین لو میرج کے مخالف نظر آئے۔

2017 کے سروے کے نتائج کے مطابق والدین کی سوچ میں واضح تبدیلی پیدا ہوئی اور 60 فیصد لوگ اپنے بچوں کی پسند کی شادی پر رضا مند نظر آئے۔ 19 فیصد والدین نے کہا کہ وہ حالات کے مطابق فیصلہ کرنے کو ترجیح دیں گے جبکہ 21 فیصد والدین لو میرج کے مخالف نظر آئے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...