وکلاء محرومیاں ختم کرنے کیلئے مرکز میں نمائندگی لینا لازمی‘ لطیف کھوسہ

       وکلاء محرومیاں ختم کرنے کیلئے مرکز میں نمائندگی لینا لازمی‘ لطیف ...

  

 ملتان (خصوصی رپو رٹر)سابق گورنر پنجاب و امیدوا ر برائے صدر سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن سردار محمد لطیف خان کھوسہ نے وکلاکی طرف سے اپنے اعزاز میں دئیے (بقیہ نمبر34صفحہ 6پر)

گئے ظہرانہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بارز کے انتخابات اور وکلادرست فیصلے ہی ملک میں تبدیلی لا سکتے ہیں جنوبی پنجاب اور اس خطہ کے وکلاکی محرومیوں کو ختم کرنے کے لئے مرکز میں نمائندگی لینا لازمی ہے جنوبی پنجاب صوبے سمیت جہاں جہاں صوبوں کی ضرورت اور مطالبہ ہے وہ فی الفو ر بننے چاہئیں پاکستان کے تمام علاقوں کو آئین کے مطابق برابری دینے کے لئے نئے سرے سے ماسٹرپلان ترتیب دینے کی ضرورت ہے پاکستان کو مضبوط کرنے کے لئے اکائیوں کو مظبوط کرنا ہوگا اب وقت آگیا ہے کہ اس خطہ کی ترقی اور با اختیار صوبہ کے قیام کے لئے مشترکہ جد و جہد کرنے کی ضرورت ہے اس خطہ کے وکلاکی صلاحیت کو مسلسل نظر انداز کرنا اور ججوں کی تعیناتی نہ ہونا کسی کی بد نیتی ظاہر کرتی ہے ہم نفرت کی بنیاد پر نہیں بلکہ میرٹ کی بنیاد پر اس خطہ کا حق مانگ رہے ہیں تقریب سے میاں عباس احمد،شیخ غیاث الحق،خالد فاروق، چوہدری محمد شفیق اور دیگر وکلانے بھی خطاب کیا اور سپریم کورٹ کے وکلاکی بڑی تعداد نے شرکت کی۔

لطیف کھوسہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -