ملتان: پرائس کنٹرول مجسٹریٹس غیر فعال‘ گراں فروشوں کی لوٹ مار 

  ملتان: پرائس کنٹرول مجسٹریٹس غیر فعال‘ گراں فروشوں کی لوٹ مار 

  

 ملتان (نیوز  رپو رٹر) ضلعی انتظامیہ کی عدم توجہی اور پرائس کنٹرول مجسٹریٹس نظام کے غیر فعال ہونے کے باعث شہریوں کو ہوشربا مہنگائی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ جبکہ گرانفروش مافیا نے خود ساختہ نرخوں سے شہریوں کو تختہ مشق بنانے میں کوئی کسر نہیں اٹھا رکھی۔ شہر بھر میں (بقیہ نمبر37صفحہ 6پر)

اشیائے خورونوش و ضروریہ کے فروخت کنندگان نے رہڑیوں سے لے کر دکانوں کی سطح پر لوٹ مار کا بازار گرم کررکھا ہے اور پچھلے چند سالوں سے نہایت سفاکی سے صارفین کی جیبیں صاف کرنے میں مصروف ہیں جبکہ انتظامیہ خاموش تماشائی بن کر شہریوں کو لٹتے دیکھ کر آنکھیں بند کرلیتی ہے پاکستان سے گفتگو کرتے ہوئے صارفین محمد ارشاد، شاہد محمود، محمد رمضان، عبدالخالق اور شمیم احمد نے بتایا کہ انتظامیہ کی عدم توجہی اور غیر ذمہ دارانہ طرز عمل کے باعث گرانفروش مافیا اشیائے خورونوش کے مختلف ایٹمز کے نرخوں میں خود ہی اضافہ کرلیتے ہیں جبکہ پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کی جانب سے نہ مانیٹرنگ کی جارہی ہے اور نہ ہی د اشیائے خورونوش کی دکانوں پر انتظامیہ کا جاری کردہ نرخنامہ اویزاں کیا جارہا ہے صارفین نے ڈپٹی کمشنر سے مطالبہ کیا ہے ضلعی انتظامیہ کی جانب سے جاری کردہ نرخنامہ کو دکانوں سمیت فروٹ فروخت کرنے والی ریہڑیوں پر آویزاں کرنے کا پابند بنایا جائے اور پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کو مانیٹرنگ کی ہدایت جاری کی جائے تاکہ شہری ان منافع خوروں کے ہاتھوں لٹنے سے محفوظ رہیں۔

لوٹ مار

مزید :

ملتان صفحہ آخر -