پاکستان کاسزامکمل ہونے پرایک اوربھارتی قیدی کورہاکرنے کافیصلہ 

پاکستان کاسزامکمل ہونے پرایک اوربھارتی قیدی کورہاکرنے کافیصلہ 
پاکستان کاسزامکمل ہونے پرایک اوربھارتی قیدی کورہاکرنے کافیصلہ 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان نے سزامکمل ہونے پرایک اوربھارتی قیدی کورہاکرنے کافیصلہ کیا ہے،ڈپٹی اٹارنی جنرل نے بھارتی قیدی کورہاکرنے سے متعلق عدالت کوآگاہ کردیا۔

نجی ٹی وی دنیا نیوز کے مطابق اسلام آبادہائیکورٹ میں بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیوکوقانونی معاونت فراہم کرنے کی درخواست پرسماعت ہوئی، اٹارنی جنرل سپریم کورٹ مصروفیت کے باعث عدالت پیش نہ ہوسکے۔

چیف جسٹس اطہر من اللہ نے استفسارکیاکہ جسپال کیس میں کیاہواوہ بتائیں،ڈپٹی اٹارنی جنرل نے کہاکہ دونوں کیسزمیں اٹارنی جنرل ہی بتاسکتے ہیں،عدالت نے کہاکہ سزامکمل ہونے پرآپ کسی کوغیرقانونی طورپرنہیں رکھ سکتے،ڈپٹی اٹارنی جنرل نے بھارتی قیدی اسماعیل کی رہائی سے متعلق دستاویزات عدالت میں جمع کرا تے ہوئے کہاکہ 22 جنوری کوقیدی اسماعیل بھی رہاہوکرچلاجائےگا۔

جسٹس عامر فاروق نے کہاکہ جورپورٹ آپ نے جمع کرائی یہ توقیدی اسماعیل کی ہے،ڈپٹی اٹارنی جنرل نے کہاکہ اس کیس میں باقی قیدی جاچکے،صرف ایک رہ گیاہے،عدالت نے استفسارکیاکہ کیابھارتی حکومت دوسرے کیس میں انٹرسٹڈنہیں؟جسٹس عامر فاروق نے استفسار کیا کہ بھارتی ہائی کمیشن کے وکیل بیرسٹرشاہنوازبھی نہیں ہیں؟،عدالت نے کہاکہ بھارتی حکومت سے پوچھ لیں کلبھوشن یادیوکیس میں حصہ لیناچاہتے ہیں؟،عدالت نے مزیدسماعت 3 فروری تک ملتوی کردی۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -علاقائی -اسلام آباد -