جعلی حج بکنگ کی شکایات ملنے پر وزارتِ مذہبی امور کا ایکشن لینے کا فیصلہ 

جعلی حج بکنگ کی شکایات ملنے پر وزارتِ مذہبی امور کا ایکشن لینے کا فیصلہ 

  

  لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)جعلی حج بکنگ کی شکایات ملنے پر وزارتِ مذہبی امور نے ایکشن لینے کا فیصلہ کر لیا۔وزارت کے ذرائع نے بتایا کہ بعض پرائیویٹ ٹورآپریٹرز اور اشخاص براہ راست یا اپنے غیرمتعلقہ ایجنٹوں کے ذریعے لوگوں سے حج درخواستوں کے نام پہ رقم وصول کر رہے ہیں۔ یہ عمل سر اسر غیر قانونی اور قابل گرفت ہے۔ ایسے تمام افراد اور کمپنیوں کو سختی (بقیہ نمبر40صفحہ6پر)

سے تاکید کی جاتی ہے کہ وہ اس غیر قانونی عمل سے بازرہیں۔ ابھی تک حج پالیسی 2022ء کا اعلان نہیں ہوا اور نہ ہی اس سلسلے میں وزارت نے کسی بینک یا ٹورآپریٹر کو حج درخواستیں وصول کرنے کی اجازت دی ہے۔ عوام الناس کو مطلع کیا جاتا ہے کہ جب تک وزارت کی ویب سائٹ، اخبارات اور الیکٹرانک میڈیا کے ذریعے حج پالیسی 2022ء کا باقاعدہ اعلان نہ ہو اور وزارت بینکوں اور پرائیویٹ ٹورآپریٹرز کو حج درخواستیں جمع کرنے کا اختیار نہ دے، کوئی بھی شخص اپنا پاسپورٹ اور رقم کسی بھی فرد یا ٹور آپریٹر کے پاس جمع نہ کرائے۔ اگر کوئی فرد یا کمپنی اس کا تقاضا کرے تو فورا ًوزارت مذہبی امور و بین المذاہب ہم آہنگی کے دئے گئے فون نمبروں پر رابطہ کریں تاکہ ان کے خلاف قانون کے مطابق ضروری تادیبی کارروائی کی جا سکے۔اِن ہدایات پر عمل نہ کرنے والا اپنے نقصان کا خود ذمہ دار ہوگا اور وزارت ِ مذہبی امور ہرگز ذمہ دار نہ ہو گی۔وزارت مذہبی امور و بین المذاہب ہم آہنگی، پہلی منزل، کوہسار بلاک، پاک سیکرٹریٹ، اسلام آبادحج  ہیلپ لائن  نمبرز 051-9205696, 051-9216980-82

جعلی حج بکنگ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -