انجینئرنگ کی تعلیم اور ریسرچ پر خصوصی توجہ دینی ہو گی: کامران بنگش

  انجینئرنگ کی تعلیم اور ریسرچ پر خصوصی توجہ دینی ہو گی: کامران بنگش

  

       پشاور(سٹاف رپورٹر)صوبائی وزیربرائے اعلی تعلیم کامران بنگش (پروچانسلر) کی زیرصدارت جمعرات کے روز گورنرہاؤس پشاورمیں یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی پشاورکا10واں سینٹ اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس میں یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹرافتخارحسین کی جانب سے یونیورسٹی کی مجموعی کارکردگی سمیت مالی و انتظامی امور، سالانہ بجٹ 2020-21 اور2021-22  کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی گئی۔اس موقع پر سینیٹ اراکین کی جانب سے یونیورسٹی بجٹ میں بہتری کیلئے مختلف تجاویز پیش کی گئی جبکہ اجلاس میں پیش کئے گئے تجاویز پرعملدرآمد کی روشنی میں سالانہ بجٹ 2021-22 کی اصولی منظوری دی گئی۔ صوبائی وزیربرائے اعلی تعلیم کامران بنگش کاکہناتھاکہ جامعات کا بنیادی کام ریسرچ ہے اور اعلی تعلیمی اداروں بالخصوص انجینئرنگ یونیورسٹی کو جدید دور کے تقاضوں کے مطابق انجینئرنگ کی تعلیم اور ریسرچ پرخصوصی توجہ دینی ہوگی۔ انہوں نے کہاکہ دنیا میں انجینئرنگ یونیورسٹیز سٹیٹ آف دی آرٹ ادارے ہوتے ہیں، مذکورہ یونیورسٹی کو جدیدتعلیم، سکل ڈویلپمنٹ اور پریکیٹیکل سٹڈی کو یقینی بناناہوگا اور ملکی اوربین الاقوامی سطح پر مقابلے کے حامل انجینئرز تیارکرنے ہوں گے۔ اجلاس میں رکن صوبائی اسمبلی انجینئر فہیم احمد،پرنسپل سیکرٹری برائے گورنرمحمودحسن، یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹرافتخارحسین، سیکرٹری اعلی تعلیم داودخان، ایڈیشنل سیکرٹری محکمہ خزانہ اورسینٹ کے دیگرمتعلقہ اراکین نے شرکت کی۔

مزید :

صفحہ اول -