ثاقب نثار مبینہ آڈیو کلپ کا معاملہ، اسلام آباد ہائیکورٹ میں سماعت کے دوران کیا کارروائی ہوئی ؟ جانئے

ثاقب نثار مبینہ آڈیو کلپ کا معاملہ، اسلام آباد ہائیکورٹ میں سماعت کے دوران ...
ثاقب نثار مبینہ آڈیو کلپ کا معاملہ، اسلام آباد ہائیکورٹ میں سماعت کے دوران کیا کارروائی ہوئی ؟ جانئے

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ اطہر من اللہ نے سابق چیف جسٹس سپریم کورٹ ثاقب نثار آڈیو کلپ معاملے کی تحقیقات کیلئے کمیشن قائم کرنے کی درخواست پر سماعت کی ، چیف جسٹس نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ  اصل آڈیوکلپ کاپتہ نہیں وہ کہاں موجودہے؟ایڈو وکیٹ صلاح الدین نے کہا کہ اصل آڈیوکلپ کہاں ہےہمیں بھی نہیں پتہ، استدعاہےکہ تحقیقات کیلئےآزادکمیشن بنایاجائے۔

چیف جسٹس نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ یہ تمام چیزیں زیرالتوااپیل سےمتعلق ہیں،جن کی اپیلیں ہیں انہوں نےتحقیقات کامطالبہ نہیں کیا؟کیا کسی کی خواہش پر ججوں سے انکوائری شروع کر دیں،وکیل نے کہا کہ درخواست میں استدعا جسٹس ثاقب نثار کے آڈیو کلپ انکوائری کی ہے ۔

چیف جسٹس نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ آڈیو ٹیپ کا فرانزک کروائیں تو خرچہ کو ن برداشت کرےگا ، صلاح الدین نے کہا کہ وزارت قانون اس کا خرچہ اٹھا سکتی ہے ، عدالت نے ریمارکس دیئے کہ کسی مستند فرانزک ایجنسی کا نام تجویز کریں جس سے کلپ کا فرانزک کروایا جائے۔ عدالت نے اٹارنی جنرل کو معاونت کیلئے 28 جنوری کو طلب کر لیا ۔

مزید :

قومی -