دنیا نے عزت بخشی ،پاکستان سے ڈاکٹر عبدالسلام کو نفرت اور ذلت ملی :بیٹے کادکھ

دنیا نے عزت بخشی ،پاکستان سے ڈاکٹر عبدالسلام کو نفرت اور ذلت ملی :بیٹے کادکھ
دنیا نے عزت بخشی ،پاکستان سے ڈاکٹر عبدالسلام کو نفرت اور ذلت ملی :بیٹے کادکھ

  

نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک)پاکستانی سائنسدان اور دنیائے اسلا م کے پہلے نوبل انعام یافتہ ڈاکٹر عبدالسلام کے اہل خانہ پاکستان کے حکمرانوں سے سخت نالاں ہیں اوران کے بینکارصاحبزادے کاکہنا ہے کہ ڈاکٹر عبدالسلام کو آئینی غیرمسلم (احمدی)ہونے کی بنا پر مسلسل نظرانداز کیا گیا ۔ایک بھارتی اخبار نے ڈاکٹر عبدالسلام کے بیٹے کے انٹر ویو کاحوالہ دیتے ہوئے کہاکہ ڈاکٹر عبدالسلام کو پاکستان نے عزت نہیں دی۔ان کے صاحبزادے احمدسلمان کا کہنا ہے کہ ان کے والد سے محض مذہب کی بنیا دپر ہی منافقت کی جاتی رہی بلکہ انہیں یہ وقت نظر انداز کیاگیا ۔ بلکہ قابل توت ہی سمجھا گیا یہاں تک کہ 1996میں جب انکا انتقال ہواتو بھی انکی شہریت ایک مسئلہ ہی بنی رہی جبکہ بھا رت سمیت کئی ممالک نے انہیں شہریت دینے کی پیشکش کر رکھی تھی جو انہوں نے قبول نہیں کی ۔احمد سلما ن کا کہنا تھا کہ پاکستان کے ایٹمی ادارے اور دوسری جانب ایجنسیاں ایٹمی معاملات پر ان سے ہدایات رہنما ئی اور مشورے لیتے لیکن سرکاری طو ر پر ایٹمی پروگرام میں ان کو حصہ نہیں بنایا گیا اور ان سے بند دروازے میں ہی پر طرح کی سائنسی مددلی جا تی ۔ احمد سلمان کا کہنا ہے کہ انہیں سب سے زیا دہ بے عزتی اور توہین کا سامنا اس وقت کر نا پڑا جب ایک مقا می عدالت کے حکم پر ڈا کٹر عدالسلام کی قبر سے پہلا مسلمان سا ئنسدان ہو نے کے الفاظ میں سے ”مسلمان“مٹا دیا گیا ۔

مزید :

بین الاقوامی -