افغانستان میں صدارتی انتخاب کی دوبارہ گنتی

افغانستان میں صدارتی انتخاب کی دوبارہ گنتی

  

امریکی صدر بارک اوباما کی مداخلت پر افغانستان میں صدارتی انتخاب کے تنازعہ میں فریقین دوبارہ گنتی پر رضامند ہو گئے ہیں، جبکہ موجودہ صدر حامد کرزئی نے بھی حامی بھر لی ہے۔ براہ راست انتخابات میں شمالی افغانستان کے عبداللہ عبداللہ کے مقابلے میں اشرف غنی جیت گئے۔ عبداللہ عبداللہ نے نتیجہ تسلیم کرنے سے انکار کر دیا اور تین دن کا الٹی میٹم دیتے ہوئے کہا کہ دھاندلی کا سدباب نہ کیا گیا تو وہ متوازی حکومت کا اعلان کر دیں گے۔ افغان صدارتی انتخابات کے پہلے مرحلے میں دونوں مرکزی امیدواروں عبداللہ عبداللہ اور اشرف غنی نے سب سے زیادہ ووٹ لئے تاہم شرح کے لحاظ سے عبداللہ عبداللہ کے ووٹ زیادہ تھے۔ بہرحال وہ50فیصد سے زائد ووٹ نہ لے سکے۔ چنانچہ رن آف الیکشن کا فیصلہ ہوا ،جس میں اشرف غنی کو کامیابی ہوئی۔عبداللہ عبداللہ کی طرف سے الٹی میٹم اور متوازی حکومت کے اعلان نے کھلبلی مچا دی۔ امریکی صدر مداخلت پر آمادہ ہو گئے اور اب جان کیری (امریکی وزیر خارجہ) افغانستان آئے اور انہوں نے عبداللہ عبداللہ، اور اشرف غنی کے ساتھ ملاقاتوں کے علاوہ صدر حامد کرزئی سے بھی تبادلہ خیال کیا، جس کے بعد ووٹوں کی دوبارہ گنتی کا فیصلہ ہو گیا ہے۔

افغانستان پہلے ہی دو حصوں پر مشتمل ہے۔روسی افواج کی واپسی کے بعد بھی یہ نسلی تنازعہ پیدا ہوا اور کابل اور مزار شریف کے درمیان تلخیاں اور دوریاں پیدا ہوئیں۔ بہرحال امریکی مداخلت اور طالبان حکومت کے خاتمہ کے بعد حامد کرزئی صدر بنے تو عبداللہ عبداللہ کو وزیر خارجہ بنایا گیا تھا۔ اتحادی افواج کی موجودگی القاعدہ اور طالبان سے جنگ کی وجہ سے ان کے درمیان مفاہمت سی رہی۔ دوسری بار صدارتی انتخابات میں حامد کرزئی کا مقابلہ عبداللہ عبداللہ نے کیا اور ہار گئے، ان کو مجبوراً تسلیم کرنا پڑا کہ اتحادی موجود تھے اور انتخابات ان کی نگرانی میں ہوئے، لیکن اس مرتبہ عبداللہ عبداللہ نے چیلنج کر دیا کہ اتحادی تو بوریا بستر گول کر کے جا رہے ہیں اور شمالی افغانستان نسبتاً پُرسکون علاقہ ہے۔ امریکہ کی فکر مندی اپنی جگہ، اسی لئے جان کیری کو آنا پڑا ہے اور اب گنتی کا فیصلہ ہو گیا۔ سوال صرف یہ ہے کہ اگر اس گنتی میں بھی کامیابی اشرف غنی کی ہوئی تو پھر عبداللہ عبداللہ اور ان کے حامیوں کا رویہ کیا ہو گا؟ یہ ضمانت یقینا امریکہ نے دی ہو گی۔افغانستان پاکستان کا قریب ترین ہمسایہ اور یہاں بسنے والے مسلمان ہیں، اس کی ہر تبدیلی سے پاکستان متاثر ہو گا، اس لئے پاکستان کی طرف سے بہت ہی محتاط رویے کا مظاہرہ کیا جا رہا ہے جو دانش مندی ہے۔ افغانستان میں امن ہو گا، تو پاکستان کو بھی مدد ملے گی۔ جان کیری کی کامیابی کے لئے دُعا کرنا چاہئے۔

مزید :

اداریہ -