سحرو افطار میں گیس کی قلت سے صارفین پریشان،ہزاروں شکایات درج

سحرو افطار میں گیس کی قلت سے صارفین پریشان،ہزاروں شکایات درج
سحرو افطار میں گیس کی قلت سے صارفین پریشان،ہزاروں شکایات درج

  

لاہور(خبر نگار) سحر اور افطار کے اوقات میں گیس پریشر ڈاﺅن رہنے اور گیس کی لوڈ شیڈنگ میں بے حد ا ضافہ ہو چکا ہے اور صارفین کی ہزاروں شکایات کے باوجود لوڈشیڈنگ میں کمی نہیں آرہی۔ گیس کمپنی کے ذرائع کا کہنا ہے کہ سحر اور افطار کے اوقات میں گیس پریشر ڈاﺅن رہنے کی شکایات کئی سو گنا بڑھ گئی ہیں اور سب سے زیادہ لاہور کے صارفین کو گیس پریشر کے ڈاﺅن ہونے، گیس کی لوڈشیڈنگ کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ لاہور کی گنجان آبادیوں کے ساتھ پوش علاقوں میں بھی گیس کی شدید ترین قلت کی شکایت مل رہی ہیں اور سحر اور افطار کے اوقات میں پوش علاقوں کے رہائشی بھی ایمرجنسی سنٹر پرفون کر کے شکایات درج کرواتے ہیں۔ذرائع کایہ بھی کہنا ہے کہ اتوار کے روز لاہور کے دس ہزار سے زائد صارفین نے گیس پریشر ڈاﺅن رہنے کے بارے میں شکایات درج کروائیں جبکہ شیخوپورہ، ننکانہ صاحب ، ساہیوال، گوجرانوالہ اور فیصل آباد اور فیصل آباد نے صارفین نے بھی گیس کی کمی کے بارے شکایات درج کروائیں۔ اس حوالے سے گیس کمپنی کے حکام کا کہنا ہے کہ ڈیمانڈ کے مقابلہ میں سپلائی میں بے حد کمی کا سامنا ہے، جس کے باعث گیس کی شدید لوڈ شیڈنگ ہو رہی ہے۔

مزید :

قومی -