اسرائیل کی فلسطین کیخلاف جارحیت عالمی ضمیر کیلئے چیلنج ہے ،ناصراقبال

اسرائیل کی فلسطین کیخلاف جارحیت عالمی ضمیر کیلئے چیلنج ہے ،ناصراقبال

  

( پ ر) ہیومن رائٹس موومنٹ کے مرکزی صدرمحمدناصراقبال خان ،سیکرٹری جنرل محمدرضاایڈووکیٹ،سینئر نائب صدرفاروق چوہان،صدرمدینہ منورہ سرفرازخان نیازی،صدرکراچی یونس میمن ،صدرپنجاب محمدیونس ملک،نائب صدور عزت رسول ایڈووکیٹ، شیخ طلال امجد ، صدرفیصل آبادندیم مصطفی ،صدر شیخوپورہ عمران حیدر،صدر منڈی بہاؤالدین مرزاخالد محمود اورنائب صدر لاہور مہران اجمل خان نے کہا ہے کہ اسرائیل کی فلسطین کیخلاف جارحیت عالمی ضمیر کیلئے چیلنج ہے۔معصوم بچوں نے بدمعاش اسرائیل کاکیا بگاڑا ہے، تعجب ہے ان کچلے اورکٹے پھٹے ہوئے پھولوں کو دیکھ کربھی یورپ میں انسانی حقوق کے علمبرداروں کاضمیر انہیں نہیں جھنجوڑتا۔اسرائیل کے جنگی جنون اورجنگی جرائم کے باوجود اقوام متحدہ سمیت کسی مقتدر ملک نے اس کی لگام تک نہیں کھینچی۔اسرائیل اپنے گھناؤنے کام سے خودکواس مقام پرلے آیا ہے جہاں لوگ اسے انتہائی نفرت کی نگاہ سے دیکھتے ہیں۔وہ ایک اجلاس سے خطاب کررہے تھے ۔محمدناصراقبال خان نے مزید کہا کہ بدقسمتی سے اس وقت مسلم حکمران اپنااپنا اقتدار بچانے میں مصروف ہیں ،انہوں نے مظلوم فلسطینیوں کی طرف مددکی پکار سنی ان سنی کردی ۔زیادہ تراسلامی ملکوں کو اندرونی شورش کاسامنا ہے،امت مسلمہ کاتصور قصہ پارینہ بن گیا ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان ایٹمی ریاست کی حیثیت سے فلسطینی عوام کواسرائیلی دہشت گردی سے بچانے کیلئے اپناکلیدی کرداراداکرے ۔ایک سوچی سمجھی ساز ش کے تحت اسلامی ملکوں کو باری باری ہدف بنایا جارہا ہے ، اسلامی ملک متحد ہوئے بغیر شیطانی قوتوں کامقابلہ نہیں کرسکتے ۔انہوں نے کہا کہ باطل کبھی حق پرغالب نہیں آسکتا،امریکہ ،اسرائیل اوربھارت ایک دوسرے کوبربادی اورانجام سے نہیں بچاسکتے ۔اگرمسلمان سچے دل سے متحدہوجائیں تودنیا کی کوئی طاقت ان کے مدمقابل نہیں ٹھہرسکتی ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -